26جنور ی تقریبات کے سلسلے میں مقبوضہ کشمیر میں ہائی الرٹ

26جنور ی تقریبات کے سلسلے میں مقبوضہ کشمیر میں ہائی الرٹ

سرینگر(کے پی آئی) نام نہاد بھارتی یوم جمہوریہ 26جنور ی کی تقریبات کے سلسلے مقبوضہ جموں کشمیر سمیت ملک بھر میں سیکورٹی کو ہائی الرٹ کردیا گیا ہے ۔ امریکی صدر باراک اوبامہ کے دورہ بھارت کے پیش نظر سیکورٹی کو اور زیادہ چوکس کردیا گیا ہے جبکہ خفیہ ایجنسیوں نے ممکنہ شدت پسندانہ حملوں کے حوالے سے الرٹ جاری کیا ہے ۔ بھارتی اخبار کے مطابق بھارتی طیارے کے ممکنہ اغوا کی کوشش کی انٹیلی جنس رپورٹوں کے پیش نظر حکام نے بھارتی ہوائی اڈوں پر ہائی الرٹ جاری کیا ہے ۔۔خفیہ رپورٹ کی بنیاد پر بھارتی ہوائی اڈوں کی سکیورٹی میں اضافہ کر دیا گیا ہے ۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سرکاری ایئر لائن ایئر انڈیا کے طیارے کی دہلی اور کابل کے درمیان پرواز کو شدت پسند نشانہ بنا سکتے ہیں۔واضح رہے کہ یہ انتباہ بھارت کے یوم جمہوریہ 26 جنوری کی تقریبات سے پہلے آیا ہے ۔۔اس بار یوم جمہوریہ کے مہمان خصوصی امریکی صدر براک اوباما ہوں گی۔حالیہ برسوں کے دوران بھارت نے دہشت گردی کے متعلق کئی الرٹ جاری کیے ہیں۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایئر انڈیا کو ایک فون آیا تھا کہ اس کا طیارہ اغوا کر لیا جائے گا۔حکام نے اتوار کو خبر رساں ایجنسیوں کو بتایا تمام ہوائی اڈوں پر سکیورٹی میں اضافہ کر دیا گیا ہے اور انٹیلی جنس کی رپورٹ پر تمام ضروری اقدامات کیے جا رہے ہیں۔رپورٹ کے مطابق اب مسافروں کی زیادہ جانچ ہوگی اور طیاروں میں مسلح مارشل میں تعینات کیے جائیں گی۔ایئر انڈیا کے ایک اہلکار نے بتایا کہ طیارے میں داخل ہونے سے پہلے مسافروں کی دوبارہ چیکنگ کی جائے گی۔اس کے علاوہ جب مسافر اپنی سیٹوں پر بیٹھ جائیں گے تو پھر ان کے سامان کے بارے میں ان سے پوچھا جائے گا۔اس دوران ملک بھر کے ریلوے اسٹیشنوں ، شاپنگ مالوں اور دیگر اہم ترین سرکاری تنصیبات پر بھی سیکورٹی کو متحرک کردیا گیا ۔ معلوم ہوا ہے کہ یوم جمہوریہ کے سلسلے میں خفیہ کیمروں کی تنصیب کا عمل بھی تیز کردیا گیا ہے۔

اور اس سلسلے میں خفیہ اور سراغرساں ایجنسیوں کو بھی کام پر لگادیا گیا ہے تاکہ کوئی بھی ناخوشگوار واقعہ پیش نہ آسکے ۔ یوم جمہوریہ کے حوالے سے جموں کشمیر میں بھی سیکورٹی کو چوکس کیا جارہا ہے جس کے تحت سرحدوں پر گشت میں تیزی لانے کے ساتھ ساتھ سیکورٹی فورسز کو اور زیادہ چوکس کردیا گیا ہے اور اندرونی طور پر بھی کسی بھی ممکنہ گڑھ بڑھ کو روکنے کیلئے سیکورٹی ایجنسیوں کو چوکس رہنے کی ہدایت دی گئی ہے ۔

مزید : عالمی منظر