بدترین لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کیلئے کالا باغ ڈیم کی تعمیر ناگزیر ہے، محمد ارشد

بدترین لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کیلئے کالا باغ ڈیم کی تعمیر ناگزیر ہے، محمد ارشد

  



لاہور( وقائع نگار)آل پاکستان انجمن تاجران کے چیف ایگز یکٹو شیخ محمد ارشد نے کہا کہ بدترین لوڈشیڈنگ سے تاجروں کوکاروبار میں مشکلات کا سامنا ہے۔ پنجاب میں بدترین لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کیلئے کالا باغ ڈیم کی تعمیر ناگزیر ہے لہٰذا سستی بجلی اور لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کیلئے کالا باغ ڈیم کو فی الفورتعمیر کیا جائے انہوں نے کہا کہ اس ڈیم کی تعمیر کی مدت 6سال ہے اور اس سے 3600میگا واٹ بجلی حاصل ہوگی جبکہ فی یونٹ بجلی کی قیمت صرف 2.50روپے ہوگی جبکہ اس وقت پرائیویٹ بجلی گھروں سے 16سے 18روپے بجلی عوام کو فراہم کرکے انہیں ذہنی مریض بنا دیا گیا ہے اس ڈیم سے 6.1ملین ایکڑ فٹ پانی ذخیرہ کرنے کی گنجائش ہوگی جس سے سارا سال دریاﺅں میں زرعی مقاصد کے لیے پانی دستیاب رہے ان خیالات کا اظہار انھو ں نے گزشتہ روز تاجروں کے اجلاس کی صدارت کر تے ہوئے کیاشیخ محمد ارشد نے کہا کہ ڈیم کی مخالفت کرنے والے اس کی افادیت کے پیش نظر مذاکرات کی میز پر آئیں۔

انہوں نے کہا کہ خیبر پختونخواہ کے سیاسی قائدین اس کی مخالف کرنے کی بجائے یہ دیکھیں کہ انہیں20لاکھ ایکڑ فٹ اضافی پانی ملے گا جبکہ بلوچستان کو 15لاکھ ایکڑ فٹ ملے گا اسی طرح سندھ کی بنجر زمینوں کے لیے بھی اضافی پانی دستیاب رہے گا۔انہوںنے کہا کہ مسلم لیگ قائداعظم کی طرف سے ڈیم کی تعمیر کی کاوشیں اور تحریک خوش آئند ہے۔مخالفت کی بجائے بجائے مشاورت ،اتفاق رائے سے جلد از جلد ڈیم کی تعمیر کا آغاز کیا جائے تاکہ پنجاب دوبارہ روشنیوں کی طرف لوٹ آئے اور ملک میں کاروباری سر گر میو ں کے فروغ سے ملکی معیشت پھل پھو ل سکے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...