دہشتگردی کو کچلنے کیلئے سخت اقدامات کی ضرورت ہے، شیرخان گورچانی

دہشتگردی کو کچلنے کیلئے سخت اقدامات کی ضرورت ہے، شیرخان گورچانی

  



لاہور(نمائندہ خصوصی) ڈپٹی سپیکر پنجاب اسمبلی سردار شیر علی خان گورچانی نے کہا ہے کہ دہشت گردی کو کچلنے کے لئے سخت ترین اقدامات وقت کی اہم ضرورت ہے۔21ویں آئینی ترمیم کی پارلیمنٹ سے منظوری سے ثابت ہوگیا ہے کہ قوم دہشت گردی کے خلاف متحد ہے ۔21ویں آئینی ترمیم کی متفقہ منظوری دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ایک اہم اقدام ہے ۔قومی قیادت نے جس اتحاد کا مظاہر ہ کیا اس کی مثال نہیں ملتی ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پنجاب اسمبلی میں اپنے دفتر میں صحافیوں سے ملاقات کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ ملک مشکل ترین دور سے گزر رہا ہے۔ موجودہ غیرمعمولی صورتحال فوری غیر معمولی اقدامات کا تقاضا کرتی ہے۔ اے پی سی کے جرا¿ت مندانہ فیصلے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے حوالے سے سنگ میل کی حیثیت رکھتے ہیں۔ آئندہ نسلوں کو پرامن پاکستان دینے کیلئے قومی قیادت کا مثالی اتفاق رائے دہشت گردی کے خاتمے کیلئے تاریخی حےثےت رکھتاہے۔دہشت گردوں کو اپنے ظلم اور بربریت کا حساب دینا ہوگا۔پاکستان کی سرزمین پر دہشت گردوں اور انتہاپسندوں کیلئے کوئی جگہ نہیں۔ عملی طور پر ثابت ہوگیا ہے کہ سیاسی جماعتیں ،سول سوسائٹی ، فوج ، سیکیورٹی ادارے اور قوم دہشت گردی کے خلاف جنگ میں شریک ہیں۔ پوری قوم دہشت گردی کے ناسور کے خاتمے کیلئے بیدار اور متحد ہے۔

گورچانی

مزید : صفحہ آخر


loading...