فوجی عدالتوں کے خیر کا مقدم ،انسداد دہشتگردی کیلئے پاکستانی کوششوں کی حمایت کرتے ہیں ،امریکہ

فوجی عدالتوں کے خیر کا مقدم ،انسداد دہشتگردی کیلئے پاکستانی کوششوں کی ...

                واشنگٹن(اے این این)امریکہ نے پاکستان میں فوجی عدالتوں کے قیام کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ انسداد دہشتگردی کے لئے پاکستان کی کوششوں کی حمایت کرتا ہے،ہم عدالتی چارہ جوئی کے باضابطہ عمل کے اصول کو یقینی بنانے کو خواہش مند ہیں،فوجی عدالتوں سے متعلق آئینی ترمیم کی تفصیلات جاننے کی کوشش کر رہے ہیں۔میڈیا بریفنگ کے دوران امریکی محکمہ خارجہ کی خاتون ترجمان جین ساکی نے کہا کہ پاکستان میں فوجی عدالتوں کے قیام سے متعلق آئینی ترمیم کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ انسداد دہشت گردی کی کوششوں کا حامی ہے، اور ساتھ ہی، عدالتی چارہ جوئی کے باضابطہ عمل کے اصول کو یقینی بنائے جانے کا خواہاں ہے۔انھوں نے کہا کہ ہم پاکستانی پارلیمان کی جانب سے فوجی عدالتوں کے قیام سے متعلق آئینی ترمیم کی منظوری کی خبروں سے آگاہ ہےں، اور اِس کے بارے میں مزید تفصیلات جاننے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ترجمان نے اِس توقع کا اظہار کیا کہ قانون اور قانونی چارہ جوئی کے عمل کی باضابطہ پاسداری ہوگی۔انھوں نے کہا کہ امریکہ عدالتی چارہ جوئی کے باضابطہ عمل کے اصول کو یقینی بنائے جانے کا خواہاں ہے۔ مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کے لیے قانونی تقاضوں کو پورا کرنا ہوگا۔ سری لنکا کے عام انتخابات سے متعلق ایک سوال پر، ترجمان نے کہا کہ امریکی وزیر خارجہ، جان کیری نے منگل کو ٹیلی فون پر سری لنکا کے صدر مہندا راجہ پکسا سے گفتگو کی اور پرامن اور منصفانہ ووٹنگ کے انعقاد کی توقع کا اظہار کیا۔بقول ترجمان، وزیر خارجہ نے اِس امید کا اظہار کیا کہ سری لنکا میں ہونے والے عام انتخابات پرامن، آزادانہ، قابل اعتماد اور منصفانہ ہوں گے، جسے یقینی بنانے کے لیے مثر اقدامات کیے جائیں گے۔ جین ساکی نے کہا کہ سری لنکا میں انتخابی مہم کے دوران ہونے والی تشدد کی کارروائیوں کا پتہ ہے، اور توقع کا اظہار کیا کہ دھاندلی سے پاک ووٹنگ اور انتخابی عمل تک مبصرین کی رسائی ممکن بنائی جائے گی۔

ترجمان محکمہ خارجہ

مزید : صفحہ آخر