صوبے کی اہم سرکاری و غیر سرکاری عمارتوں کی حفاظت کیلئے آرڈیننس جاری

صوبے کی اہم سرکاری و غیر سرکاری عمارتوں کی حفاظت کیلئے آرڈیننس جاری

                   لاہور(شہباز اکمل جندرن//انوسٹی گیشن سیل) پنجاب حکومت نے دہشت گردی سے بچاﺅ کے پیش نظر صوبے میں اہم سرکاری و غیر سرکاری عمارتوں کی حفاظت کے لیے آرڈیننس جاری کردیا ہے۔”دی پنجاب سیکیورٹی ولنریبل اسٹیبلشمنٹ آرڈیننس 2015 “ کے تحت ہر ضلع کا ڈی سی او ایک سکیورٹی ایڈوائزری کمیٹی تشکیل دیگا۔جس کا انچارج متعلقہ سب ڈویژنل پولیس افسر ہوگا۔ جبکہ ضلعی حکومت ، سپیشل برانچ اور کاﺅنٹر ٹیرازم ڈیپارٹمنٹ کا ایک ایک گریڈ 16کا ملازم اور متعلقہ تاجر تنظیموں یا سٹیک ہولڈر کا ایک نمائندہ ممبران میں شامل ہونگے۔غیر محفوظ عمارتوں کے حوالے سے کمیٹی اپنی رپورٹ ڈی سی اواور ڈی پی او کو ارسال کریگی ۔ اور ایسی عمارتوں کا سہ ماہی بنیادوں پر معائنہ کریگی۔غیر محفوظ عمارتوں میںعبادت گاہیں ، وفاقی و صوبائی سرکاری دفاتر ، غیر ملکی منصوبے ، ہسپتال ،بینک ،منی چینجر ، سکول ، کالج،پرائیویٹ کلینک ، پبلک پارک ، شادی ہال ، پٹرول پمپ ، سی این جی سٹیشن ، عدالتیں، سپیشل بازار ، کمرشل علاقے ،جیولری شاپس اور شاپنگ آرکیڈ وغیرہ شامل ہیں۔

آرڈیننس

مزید : صفحہ آخر