خصوصی بچوں کو تعلیمی اداروں میں لانا پورے معاشرے کی ذمہ داری ہے،آصف منہیس

خصوصی بچوں کو تعلیمی اداروں میں لانا پورے معاشرے کی ذمہ داری ہے،آصف منہیس

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)پاکستان سے محبت اور پاکستان کی تعمیر کا یہ بھی تقاضا ہے کہ ہمارے وطن عزیز کے وہ نونہال جنہیں عرف عام میں اسپیشل چائلڈ کہا جاتا ہے ان بچوں کو گھروں سے تعلیمی اداروں میں لانا انہیں فعال شہری بنانا معاشرے کی اجتماعی ذمہ داری ہے ہمارا یہ فرض ہے کہ ہم اسکو یقینی بنائیں کہ کوئی خصوصی بچہ علم سے محروم نہ رہے آج کے دور میں ہم اپنے گردوپیش کے حالات کا جائزہ لیں تو ہم پریہ بات واضح ہو جائے گی کہ عُرفِ عام میں ہم جنہیں بہت اسپیشل بچے کہتے ہیں ایسے بچے بڑوں کی ذراسی کوششوں اور توجہ سے ایسے ایسے کام کرجاتے ہیں جو اپنے اطراف میں موجود لوگوں کو حیران کر دیتے ہیں ان خیالات اظہار گزشتہ روز بز م ہمدرد نونہال میں ’’پاکستان سے تعمیر کرو پاکستان کی تعمیر کرو‘‘قولِ سعید کے موضوع پر صدر ہمدرد فاؤنڈیشن پاکستان سعدیہ راشد ،وزیر برائے خصوصی تعلیم حکومت پنجاب آصف سعید منہیس ،ممبر صوبائی اسمبلی ڈاکٹر عالیہ آفتاب،شہزاد ہ کبیر احمد ،زیب النساء اور عبدالقدیر آس نے کیا اس موقع پر نونہال مقررین نویرا بابر، مہرال قمر، ملائیکہ صابر، طیبہ رزاق ،دعا منصور ،محمد علی اور الوینہ خان شامل تھے ۔مقررین نے اپنے خیالات میں کہا کہ حکیم صاحب نے اپنی پوری زندگی خدمت خلق کے لیے وقف کر دی تھی ،وہ نونہالوں کی بہترین تعلیم و تربیت اور ان میں خوداری اور خود اعتمادی کو پاکستان کی ترقی و استحکام کے لیے ضروری سمجھتے تھے۔شہید پاکستان حکیم محمد سعید ہمیشہ ہمیں بڑی درد مندی کے ساتھ اس بات کا درس دیتے رہے کہ اگر پاکستان ہے توہم باعزت بھی ہیں اور آزاد بھی ہیں ۔ہمیں اس سے محبت کرنی چاہئے اور اسکی تعمیر میں حصہ لینا چاہیے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1