مشاورات کے بعد سپریم کورٹ سے رجوع کرینگے وفاق المدارس العربیہ

مشاورات کے بعد سپریم کورٹ سے رجوع کرینگے وفاق المدارس العربیہ

  



          اسلام آباد(آن لائن)وفاق المدارس العربیہ نے 21ویں آئینی ترمیم کوجانبدارانہ ،غیرمنصفانہ اورغیرحقیقت پسندانہ قراردیتے ہوئے مستردکرتے ہوئے سپریم کورٹ سے رجوع کرنے کاعندیہ دیدیا۔ جمعرات اورجمعہ کی درمیانی شب وفاق المدارس العربیہ کا طویل ترین اجلاس مولاناعبدالرزاق سکندرکی زیرصدارت اسلام آبادکے مقامی ہوٹل میں شروع ہوا، اجلاس میں مفتی رفیع عثمانی ،جمعیت علماءاسلام (ف)کے سربراہ مولانافضل الرحمن ،وفاق المدرس العربیہ کے سیکرٹری جنرل قاری حنیف جالندری ،جامعہ بنوری ٹاو¿ن کراچی کے مہتمم مفتی نعیم سمیت کراچی تاخیبرتمام مدارس کے جیدعلماءکرام اوراساتذہ کرام نے شرکت کی ۔اعلامیے میں کہاگیاہے کہ ہم سانحہ پشاورکی شدیدالفاظ میں مذمت کرتے ہیں اورمطالبہ کرتے ہیں کہ دہشتگردی کے خلاف بلاتفریق اقدامات اٹھائے جائیں ۔اعلامیہ میں کہاگیاکہ اکیسویں آئینی ترمیم جانبدار،غیرمنصفانہ اورغیرحقیقت پسندانہ ہے ،آئینی ترمیم میں مذہب اورفرقہ کاتذکرہ جانبداری اوربدنیتی پرمبنی ہے جودہشتگردی کی تقسیم اورتفریق کاباعث ہے ،تمام دہشتگردوں کے خلاف بلاامتیاز،بلارنگ ونسل اورقومیت ،لسانیت اورصوبائیت کے تعصبات سے بالاترہوکرکارروائی کی جائے۔اس موقع پرمولانافضل الرحمن نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ مذہبی قیادت نے فیصلہ کیاہے کہ اکیسویں آئینی ترمیم پرقانونی مشاورت کے بعدسپریم کورٹ جائیں گے ۔انہوںنے کہاکہ ہم مسئلہ کے حل کیلئے اوراپنے تحفظات سے آگاہی کیلئے آرمی چیف اورڈی جی آئی ایس آئی سے ملاقات کے خواہشمندہیں، حکومت سے بھی مذاکرات کے حامی ہیں۔ انہوںنے کہاکہ اکیسویں آئینی ترمیم میں مذہب وفرقہ کے نام پراعتراض نہیں بلکہ اس بات پراعتراض ہے کہ صرف مذہبی لوگوں کوٹارگٹ کیاگیاہے اورلسانیت ،قومیت اورصوبائیت کے حوالے سے دہشتگردوں کوکوردیاگیاہے ۔انہوں نے کہاکہ ہمارامطالبہ ہے کہ ملٹری کورٹ میں سیاسی جماعتوں کے مسلح ونگ بھی چلائے جائیں ،اس حوالے سے سپریم کورٹ کی کارروائی سب کے سامنے ہے ۔اس موقع پرمفتی اعظم پاکستان مفتی رفیع عثمانی نے کہاکہ مولانافضل الرحمن کے مو¿قف کی مکمل تائیدکرتے ہیں ،سانحہ پشاورکی آڑمیں مدارس کودہشتگردی کے مراکزظاہرکرنے کی کوشش کی گئی جوکہ قابل مذمت ہے ۔انہوںنے کہاکہ ہم حکومت کوآفرکرتے ہیں کہ مدارس کی جامعہ تلاشی لی جائے یہاں سے اسلحہ یادہشتگردی کاسامان نہیں ملے گاکیونکہ ہم عسکریت پسندی کی نہیں امن پسندی کی تعلیم دیتے ہیں ۔وفاق المدارس العربیہ کے مرکزی سیکرٹری جنرل قاری حنیف جالندھری نے کہاکہ سانحہ پشاورکے پس منظراورحقائق کوسامنے لایاجائے ۔

وفاق المدارس العربیہ

مزید : علاقائی