سوشل میڈیا پر اپنی سلفی اپ لوڈ کرنے کرنے والے مردہوشیار ہو جائیں

سوشل میڈیا پر اپنی سلفی اپ لوڈ کرنے کرنے والے مردہوشیار ہو جائیں
 سوشل میڈیا پر اپنی سلفی اپ لوڈ کرنے کرنے والے مردہوشیار ہو جائیں

  



نیویارک (نیوز ڈیسک) سوشل میڈیا خصوصاً فیس بک کی عام مقبولیت کے بعد نوجوانوں میں یہ رجحان بہت عام ہوچکا ہے کہ وہ آئے دن اپنی تازہ ترین تصاویر انٹرنیٹ پر بھیجتے ہیں لیکن ایک حالیہ تحقیق کے مطابق یہ عادت شوہروں اور بوائے فرینڈز کے حق میں اچھی نہیں۔اوہائیو سٹیٹ یونیورسٹی کے نفسیات دانوں نے 18 سے 40 سال عمر کے 800 مردوں پر تحقیق کی جس میں معلوم ہوا کہ جو مرد کثرت سے اپنی تصاویر فیس بک اور انسٹا گرام جیسی ویب سائٹوں پر بھیجتے ہیں ان میں خود پسندی اور سماجی و نفسیاتی مسائل کی شرح زیادہ پائی جاتی ہے اور یہ لڑکیوں کی نظر میں تیزی سے غیر مقبول ہوسکتے ہیں۔ اسی طرح جو مرد اپنی تصویریں بھیجنے سے پہلے انہیں مزید اچھا بنانے کے لئے ایڈٹ کرتے ہیں ان کا مسئلہ اور بھی شدید ہوتا ہے اور وہ عموماً خود اعتمادی میں کمی اور نفسیاتی مسائل کا شکار ہوتے ہیں۔ یہ خود کو ایک نارمل انسان کی بجائے ایک دلکش چیز بنانے کے عارضے میں مبتلا ہوجاتے ہیں اور ان کے بارے میں خواتین اور لڑکیاں جلد ہی سمجھ جاتی ہیں کہ یہ سماجی اور نفسیاتی طور پر احساس کمتری کا شکار ہیں اور اس لئے وہ ایسے مردوں سے دور رہنا ہی

مزید : علاقائی


loading...