15روز گزر گئے، دو بچوں کے باپ کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی، انصاف کی اپیل

15روز گزر گئے، دو بچوں کے باپ کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی، انصاف کی ...
15روز گزر گئے، دو بچوں کے باپ کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی، انصاف کی اپیل

  

لاہور( کر ائم سیل) پلاٹ کے تنازع پر قبضہ گروپ کے ہاتھوں قتل ہونے والے2بچوں کے باپ کے قاتلوں کو فیکٹری ایریا پولیس پندرہ روز گزرنے کے بعد بھی گرفتار نہ کرسکی۔ وزیر اعلیٰ پنجاب اور آئی جی انصاف دلا ئیں،مقتول کی بیوہ اور بیٹوں کی میڈیا گفتگو ۔تفصیلا ت کے مطابق فیکٹری ایریا کے رہائشی محمد نواز کے پلاٹ پر غلام یٰسین وغیرہ نے قبضہ کر رکھا تھا۔ محمد نواز اپنے پلاٹ کو قبضہ گروپ سے واگزار کراناچاہتا تھا ۔ 21دسمبر 2014کو محمد نواز کو اطلاع ملی کہ غلام یٰسین وغیرہ اس کے پلاٹ پر زبردستی تعمیر شروع کررہے ہیں تو محمد نواز قبضہ گروپ کے سر غنہ غلام یٰسین کی منت سماجت کرنے کیلئے محمد فیصل اور محمد سلیم کے ہمراہ پلاٹ پرپہنچا۔ غلام یٰسین نے آتشیں اسلحہ نکال لیا اور محمد نواز کو فائرنگ کرکے شدید زخمی کردیا جبکہ محمد نواز کے ساتھی دیواروں کی اوُٹ میں جا نیں بچانے میں کامیاب ہو گئے۔ ملزمان جائے وقوعہ سے فرار ہوگئے ۔مضروب نواز کو فوری طبی امداد کے لیے میو ہسپتال پہنچایاگیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہو ئے جان کی بازی ہارگیا ۔مقتول کی بیوہ نے بتایا کہ علاقہ پولیس نے مقدمہ تو درج کرلیا ہے لیکن ملزمان کو گرفتار کرنے کی بجائے اس مقدمہ قتل کی ایف آئی آرکو فائل کی زینت بنالیاہے ۔مقتول کی بیوہ اور دوکمسن بچوں ارسلان، فیضان اور اہل علاقہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف اورآئی جی پنجاب مشتاق سکھیراسے اپیل کی ہے کہ ملزمان کو گرفتار کرنے کیلئے ذمہ داران کو احکامات جاری کئے جا ئیں اورملزموں کو تختہ دار پر چڑھا کر انصاف کے تقاضے پورے کئے جائیں۔

مزید : علاقائی