وزیر داخلہ کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان جائزہ اجلاس، رجسٹرڈ افغانیوں کو واپس بھیجنے کافیصلہ

وزیر داخلہ کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان جائزہ اجلاس، رجسٹرڈ افغانیوں کو واپس ...
وزیر داخلہ کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان جائزہ اجلاس، رجسٹرڈ افغانیوں کو واپس بھیجنے کافیصلہ

  



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) دہشت گردی کے خلاف قومی ایکشن پلان کے تحت پنجاب میں رجسٹرڈ 7,000 افغانیوں کو اقوام متحدہ اور وزارت خارجہ کے ذریعے واپس بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کی زیر صدارت نیشنل ایکشن پلان سے متعلق جائزہ اجلاس ہوا جس میں نیکٹا اور وزارت داخلہ سمیت دیگر حکام نے شرکت کی۔ تفصیلات کے مطابق اجلاس میں میں بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ وزارت داخلہ اور نیکٹا قومی ایکشن پلان پر موثر عملدرآمد کر رہے ہیں جن میں صوبائی حکومتوں اور عسکری حکام کا تعاون بھی شامل ہے۔

بریفنگ میں مزید بتایا گیا کہ ملک بھر میں سرچ آپریشن کے دوران 2,000 افراد گرفتار کئے گئے ہیں اور یہ سلسلہ جاری ہے جبکہ پنجاب میں 7,000 افغانی بائیو میٹرک سسٹم کے ذریعے رجسٹرڈ ہوئے ہیں جنہیں اقوام متحدہ اور وزارت خارجہ کے ذریعے واپس بھیجا جائے گا۔ اجلاس میں صوبوں کی رجسٹریشن کا معاملہ بھی زیر بحث آیا جس پر فیصلہ کیا گیا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتیں مشترکہ تعاون سے مدارس کی جانچ پڑتال کریں گی۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...