تہاڑ جیل میں کشمیری قیدیوں کی زندگیوں کو اجیرن بنادیا گیا ، سید علی گیلانی

تہاڑ جیل میں کشمیری قیدیوں کی زندگیوں کو اجیرن بنادیا گیا ، سید علی گیلانی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

سرینگر(اے این این ) کل جماعتی حریت کانفرنس (گ) کے چیئر مین سید علی گیلانی نے تہاڑ جیل میں کشمیری قیدیوں کی حالت زار پر گہری تشویش اور فکرمندی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان کو ہر طرح سے عذاب وعتاب کا نشانہ بنایا جارہا ہے اور وہاں ان کی زندگیوں کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔ انہوں نے تہار جیل میں مقید کشمیری قیدیوں کی فی الفور وادی منتقلی کی ایک بار پھر اپنی دیرینہ مانگ دہراتے ہوئے کہا کہ ان قیدیوں کو نہ تو جیل مینول کے تحت غزائیں فراہم کی جاتی ہیں اور نہ ہی ان کا علاج ومعالجہ کے لیے اسپتال لے جایا جاتا ہے، جس وجہ سے ان کی زندگیوں کو اجیرن بنادیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شبیر احمد شاہ، الطاف احمد شاہ، ڈاکٹر غلام محمد بٹ ، پیر سیف اللہ، ایاز اکبر، راجہ معراج الدین، شاہد اسلام، نعیم احمد خان، فاروق احمد ڈار، شاہد یوسف، کامراج یوسف، ظہور احمد وٹالی سمیت دیگر قیدیوں کی طبی حالت بھی ٹھیک نہیں ہے اور جیل میں انہیں کوئی گزند پہنچی تو اس کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔ گیلانی نے مزید کہا کہ ڈاکٹر غلام محمد بٹ جو پچھلے آٹھ سال سے تہاڑ جیل میں جرم بے گناہی کی سزا کاٹ رہے ہیں اور کافی عارضوں میں مبتلا بھی ہیں کی بائیں آنکھ متاثر ہوگئی ہے اور جیل انتظامیہ انہیں اسپتال میں چیک اپ نہیں کراتی ہے جس کی وجہ سے اس کی آنکھ کی بینائی متاثر ہونے کا اندیشہ ہے۔


گیلانی نے جموں کشمیر کی جیلوں میں دیگر آزادی پسندوں مسرت عالم بٹ، ڈاکٹر محمد قاسم، ڈاکٹر محمد شفیع شریعتی، غلام محمد خان سوپوری، امیرِ حمزہ شاہ، میر حفیظ اللہ، محمد یوسف فلاحی، عبدالغنی بٹ، محمد یوسف لون، محمد شعبان ڈار، رئیس احمد میر، محمد یوسف میر، عبدالاحد پرہ، محمد رفیق گنائی، غلام قادر بٹ، محمد شعبان خان، سلمان یوسف، شکیل احمد یتو، منظور احمد کلو، محمد سبحان وانی، سرجان برکاتی، عبدالخالق ریگو، غلام محمد تانترے، ناصر احمد گنائی، بشیر احمد وانی، عبدالعزیز گنائی، شیخ دانش، نذیر احمد منٹو، جاوید احمد فلاحی، عبدالحمید پرے، اسداللہ پرے، غلام حسن ملک، اعجاز احمد برو، مشتاق احمد ہرہ، مشتاق احمد کھانڈے، فارو ق احمد بٹ، جاوید احمد میر، محمد رمضان بٹ، غلام نبی خان، مفتی عبدالاحد راتھر، محمد امین آہنگر، محمد امین،شوکت حکیم، بشیر احمد صالح، شیخ فاروق، سجاد احمد چوپان، سجاد احمد میر، سہیل احمد شیخ، عبدالسلام میر، محمد سلطان سوپوری،اشفاق احمد پرے، ارشاد احمد پرہ، سجاد احمد نوہ، خورشید احمد لون، معراج الدین نندہ، گلزار احمد وانی، اخلاص احمد شیخ اور فاروق احمد صوفی کو فرضی الزامات کے تحت جیلوں میں قید رکھنے اور ان کی اسیری کو طول دینے کی کارروائی کی بھی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

Ba

مزید :

عالمی منظر -