ہیپاٹائٹس کی روک تھام ، پارلر ز اور حجاموں کی رجسٹریشن جلد مکمل کرنے کا فیصلہ

ہیپاٹائٹس کی روک تھام ، پارلر ز اور حجاموں کی رجسٹریشن جلد مکمل کرنے کا ...

لاہور(جنرل رپورٹر)صوبائی وزیر پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ خواجہ عمران نذیر کے زیر صدارت ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ کا آٹھواں ماہانہ اجلاس پراونشل کوالٹی کنٹرول بورڈ جوہر ٹاؤن میں منعقد ہوا۔اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے صوبائی وزیر خواجہ عمران نذیر کا کہنا تھا کہ سنٹرلاءئیزڈباربر اینڈ بیوٹی سیلون لائسنسنگ سسٹم کے تحت تمام پارلرز اورحجام کی رجسٹریشن کو جلد از جلد مکمل کی جائے گی،جس سے ہیپا ٹائٹس اور انفیکشن کنٹرول پروگرام کو مزید تقویت ملے گی اور ہیپا ٹائٹس اور دوسرے وبائی امراض کے تدارک کو یقینی بنا لیا جائے گا۔ سنٹرلائیذڈباربر اینڈ بیوٹی سیلون لائسنسنگ سسٹم کے تحت اب تک 482درخواستوں کا سسٹم میں اندراج ہو چکا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب حکومت کی شعبہ صحت میں بہتری کی سنجیدہ کوششوں کے دوررس نتائج مرتب ہوں گے۔اجلاس میں سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ علی جان خان،ایڈیشنل سیکرٹری ڈرگز کنٹرول محمدسہیل،چیف ڈرگز کنٹرولرپنجاب محمدمنورحیات کے علاوہ پراونشل ڈرگز کنٹرول یونٹ، پراونشل کوالٹی کنٹرول بورڈ، چیف ڈرگزکنٹرولرپنجاب آفس کے افسران اورتمام اضلاع کے سیکرٹریز ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ نے شرکت کی۔ سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ علی جان خان نے میٹنگ میں تمام اضلاع کی ماہانہ کارکردگی کا جائزہ لیا ۔میٹنگ میں سیکرٹریز ڈسٹرکٹ کوالٹی بورڈ کی ماہانہ کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں ایڈیشنل سیکرٹری ڈرگز کنٹرول محمدسہیل نے موجود افسران کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ گزشتہ ماہDQCB نے397 کیسز کا فیصلہ کیا،جن میں 145کو وارننگ دی گئی اور 223کیسز کو پراسیکوشن کے لیے پیش کیاجبکہ 13کیسزمیں ایف۔آئی۔آر۔ درج کروائی گئی۔میٹنگ کے اختتام پر لائسنسنگ اتھارٹی سی ڈی سی پنجاب محمد منور حیات نے بتایا کہ اب تک سنٹرل لائسنسنگ سسٹم کے زیرِ تحت 12569 لائسنسزپرنٹ کیے جا چکے ہیں جبکہ21799فائلز کا سسٹم میں اندراج کیا جاچکا ہے۔

کوالٹی کنٹرول

مزید : میٹروپولیٹن 1