پاناما لیکس کے 436کرداروں کو جلد از جلد احتساب کے کٹہرے میں لایا جائے : سراج الحق

پاناما لیکس کے 436کرداروں کو جلد از جلد احتساب کے کٹہرے میں لایا جائے : سراج ...

  

لاہور (آن لائن) جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ دن بدن سینیٹ الیکشن اور عام انتخابات پرگردو غبار کے بادل گہرے ہورہے ہیں اور ایک بے یقینی کی کیفیت پیدا کی جارہی ہے جو قومی یکجہتی اور ملکی استحکام کیلئے انتہائی خطرناک ہے ۔ احتساب کیلئے سپریم کورٹ اور نیب کچھوے کی چال چل رہے ہیں جبکہ قوم خرگوش کی چال سے احتساب چاہتی ہے ۔ جماعت اسلامی نے پاناما لیکس کے جن 436 کرداروں کے خلاف پٹیشن دائر کی ہے ، ان کو جلد از جلد احتساب کے کٹہرے میں لایا جائے اور عدلیہ احتساب کے عمل کو جلد مکمل کرے ۔ امریکہ پاکستان کی زمینی و فضائی حدود بھی استعمال کر رہاہے اور پاکستان کو آنکھیں بھی دکھا رہاہے ۔ امریکہ کو اس کی اوقات میں لانے کیلئے فوری طور پر نیٹو سپلائی بند اور زمینی و فضائی حدود استعمال کرنے سے روک دیا جائے ۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے منصورہ میں مختلف وفود سے ملاقات کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ احتساب کا عمل جلد از جلد مکمل ہونا ضروری ہے عدالت عالیہ سے ہماری درخواست ہے کہ پانامہ لیکس کے دیگر کرداروں کو بھی جلد انصاف کے کٹہرے میں کھڑا کیا جائے تاکہ عوام کو احتساب ہوتا نظر آئے ۔ انہوں نے کہاکہ جب تک چوری کی دولت ملک میں واپس نہیں آتی ، احتساب کھوکھلا رہے گا اس لیے ضروری ہے کہ عدالت عالیہ بیرونی بینکوں میں منتقل کی گئی دولت کی واپسی کا ایک میکنزم بنائے اور بیرون ملک پڑی ہوئی دولت کا مکمل کھوج لگایا جائے اور اگر ہمارا اپنا سرمایہ ملک میں آ جائے تو ہمیں آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک سے قرضوں کی بھیک مانگنا پڑے نہ ٹرمپ جیسے لوگوں کی باتیں سننا پڑیں ۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -