نشتر میں سوائن فلو کی ایک اور مریضہ چل بسی ، 10نئے مریض داخل

نشتر میں سوائن فلو کی ایک اور مریضہ چل بسی ، 10نئے مریض داخل

ملتان(وقائع نگار)نشتر ہسپتال میں سوائن فلو کی ایک اور مریضہ گزشتہ روز دم توڑ گئی ہے جس سے اس مرض کے باعث فوت ہونے والے مریضوں کی مجموعی تعداد17ہوگئی ہے۔30سالہ ناز کا تعلق بھی ملتان سے ہے۔جو نشتر ہسپتال کے آئی سی یو وارڈ میں تشویش ناک حالت میں زیر علاج تھی۔سوائن فلو(سیزنل انفلوئنزا ایچ ون این ون)کے شبہ میں10نئے مریض نشتر ہسپتال میں داخل کروائے گئے ہیں اس وقت ہسپتال میں20 مریض داخل ہیں جس میں18مریض آئسولیشن وارڈ اور 2آئی سی یو وارڈ میں داخل ہیں۔آئی سی یو میں داخل دونوں مریضوں کے ٹیسٹ رپورٹ نیگیٹو آئی ہیں۔آئسولیشن وارڈ میں10مریضوں کی رپورٹ پازیٹو ہے 4مریضوں کی ٹیسٹ رپورٹ نیگیٹو آئی ہے۔جبکہ 4مریضوں کی رپورٹ کا ابھی انتظار ہے۔واضع رہے نشتر ہسپتال کے ایک ٹیکنیشن آئی سی یو وارڈ کو بھی سوائن فلو کی تصدیق ہوئی ہے جبکہ ایک لیڈی ڈاکٹر میں بھی سوائن فلو کی تصدیق ہوئی ہے۔نشتر ہسپتال میں گزشتہ تقریباً ایک ماہ کے دوران114مریضوں کو سوائن فلو کے شبہ میں لایا گیا ہے۔جس میں 54مریضوں میں سوائن فلو کی تصدیق ہوئی ہے۔فوت ہونے والے 12مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے،3کا مظفرگڑھ،1کا تعلق وہاڑی جبکہ 1کا تعلق ضلع راجن پور سے ہے۔مریضوں کے لواحقین کا کہنا ہے کہ آئسولیشن وارڈ میں سوائن فلو کے مریضوں کیلئے بیڈز کم پڑرہے ہیں۔ہسپتال انتطامیہ کو اس بارے میں خصوصی اور جلد از جلد اقدامات کرنے چاہیے اور لواحقین کیلئے بھی سوائن فلو کی ویکسین نہیں کروائی جارہی ہے صرف من پسند افراد کو یہ سہولت دی جارہی ہے۔شکایت کرنے کے باوجود انتظامیہ پر کوئی اثر نہیں پڑرہا ہے۔

سوائن فلو

مزید : کراچی صفحہ اول