خیبر پختونخوا حکومت کا پشاور میں پانچ روزہ بدھ مت کانفرنس منعقد کرنے کا فیصلہ

  خیبر پختونخوا حکومت کا پشاور میں پانچ روزہ بدھ مت کانفرنس منعقد کرنے کا ...

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبر پختو ن خوا کے سینئر وزیر عاطف خان نے کہا ہے کہ اپریل کے پہلے ہفتے میں پشاور میں پانچ روزہ بدھ مت کانفرنس کا انعقاد کیا جائیگا۔کانفرنس میں بدھ مت ممالک چائینہ، جاپان، کوریا، تھائی لینڈ نیپال، سری لنکا سمیت دیگر ممالک کے سفراء اور بدھ مت کے اہلکاروں کو مدعو کیا جائیگا۔ یہ فیصلہ سینئر وزیر عاطف خان کی زیرصدارت اجلاس میں ہوا۔اجلاس میں سیکرٹری سیاحت وآرکیالوجی کامران رحمان اور ڈائریکٹر آرکیالوجی سمیت دیگر حکام نے شرکت کی۔سینئر وزیر نے کہا کہ کانفرنس کا مقصد مذہبی سیاحت کو فروغ دینا اور صوبے میں موجود آرکیالوجیکل سائٹس کے بارے میں آگہی پیدا کرنا ہے، کانفرنس میں قومی اور بین القوامی آرکیالوجیل ماہرین شرکت کریں گے اور مذہبی سیاحت کے فروغ کے لئے تجاویز پیش کریں گے،انہوں نے کہا کہ صوبے میں 2 ہزار بدھ مت سائٹس سمیت 6000 ارکیالوجیکل سائٹس موجود ہیں جنہیں محفوظ کیا جارہا ہے، موجودہ صوبائی حکومت مذہبی سیاحت کو فروغ دے رہی ہے اور اس سلسلے میں بدھ مت کانفرنس کا انعقادبھی کیا جارہا ہے، مذہبی سیاحت سے مذہبی ہم آہنگی سمیت صوبے کا مثبت تاثردنیاکو سامنے آجائیگا۔سینئر وزیر نے محکمہ آرکیالوجی کو کانفرنس کے لئے تمام تر تیاریاں مکمل کرنے کی ہدایت کی۔اس موقع پر سینئر وزیر کو مربوط سیاحتی زونز پر پیشرفت اور سیاحتی مقامات تک سڑکوں کی تعمیر کے حوالے سے بھی بریفنگ دی گئی۔سینئر وزیرنے سیاحتی مقامات تک سڑکوں کی تعمیر سیاحتی سیزن سے پہلے مکمل کرنے کی ہدایت کی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...