پنجاب ریونیو بورڈ کی ششماہی آمدن میں پونے 22ارب روپے کی کمی

  پنجاب ریونیو بورڈ کی ششماہی آمدن میں پونے 22ارب روپے کی کمی

  



لاہور(عامر بٹ سے) بورڈ آف ریونیو نے پنجاب حکومت کی مالی مشکلات میں کمی کی بجائے اضافہ کر دیا۔ معلومات کے مطابق پنجاب حکومت نے موجودہ مالی سال میں محکمہ بورڈ آف ریونیو کے ذریعے 81 ارب 15 کروڑ 60 لاکھ روپے آمدن کا تخمینہ لگایا تھا۔مگر تبدیلی سرکار کا یہ خواب شرمندہ تعبیر نہ ہو سکا۔دسمبر تک بورڈ آف ریونیو نے 28 ارب 50 کروڑ 44 لاکھ 93 ہزار روپے وصول کرنے تھے مگر صرف 5 ارب 52 کروڑ 6 لاکھ 30 ہزار روپے ہی وصول کیے جا سکے۔بورڈ آف ریونیو گزشتہ ماہ تک 27 ارب سے زائد رقم کی وصولی میں ناکام۔محکمہ خزانہ پنجاب نے بورڈ آف ریونیو سے وضاحت طلب کر لی۔بورڈ آف ریونیو کو زرعی آمدن کی مد میں 22 کروڑ، جائیداد کی منتقلی پر 2 کروڑ 89 لاکھ، لینڈ ریونیو کی مد میں 5 ارب 21 کروڑ 32 لاکھ 73 ہزار، غیر منقولہ جائیداد پر کیپٹل ویلیو ٹیکس کی مد میں 7 کروڑ 11 لاکھ 55 ہزار، اسٹامپ ڈیوٹی کی مد میں 21 ارب 75 کروڑ 81 لاکھ 10 ہزار سے زائد رقم کی کمی رہی۔

بورڈ آف ریونیو

مزید : صفحہ آخر