قومی، صوبائی اسمبلیوں کامعاشرے کی رہنمائی کیلئے کردار صفر، سید ذیشان اختر کی بات چیت

  قومی، صوبائی اسمبلیوں کامعاشرے کی رہنمائی کیلئے کردار صفر، سید ذیشان اختر ...

  



بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر)نائب امیر صوبہ جماعت اسلامی جنوبی پنجاب سید ذیشان اختر ے کہاہے کہ ثابت ہوگیاہے کہ وزیراعظم ملک کو آئینی، جمہوری، پارلیمانی اقدار کے ساتھ چلانے کی اہلیت نہیں رکھتے۔ ملک اِس وقت ایک بحران سے(بقیہ نمبر20صفحہ12پر)

نکلتاہے تو دوسرے بحران کا شکارہوجاتا ہے۔حکومت نے غیر ذمہ دارانہ رویوں اور طرزِ حکمرانی سے پارلیمنٹ اور اسمبلیوں کو مفلوج کردیا ہے، قانون سازی کی بجائے آرڈی نینس کے ذریعے ایڈہاک ازم مستحکم ہورہاہے۔ ملک آئینی پارلیمانی بحران کا شکارکردیا گیا ہے قومی اور صوبائی اسمبلیوں کا معاشرے کی رہنمائی کے لیے کردار صفر ہے۔ وکلاء، ڈاکٹرز، عدلیہ، کے درمیان تناو ¿ کے خاتمہ کے لیے حکومت بروقت اقدامات کرنے میں بھی نااہل ثابت ہوئی ہے،ذرائع ابلاغ کی آزادی پر قدغن عائد کرنے کے خفیہ اعلانیہ اقدامات، میڈیا کے ذمہ دارانہ کردار کے لیے ماحول نہ بنانا بھی حکومتی نا اہلی ہے عملاً یہ فاشزم کی طرف پیش رفت ہے۔ سیاسی جمہوری محاذ پر دوریاں اور تناو سے خطرہ بڑھتا جارہاہے۔ روز وعدے، اعلانات اور پھر یوٹرن نے حکومت کو بے وقعت کردیاہے۔ مہنگائی کا جن بوتل سے باہر آگیاہے، حکومت کا ہر لفظ بے اعتبار ہوچکاہے۔

ذیشان اختر

مزید : ملتان صفحہ آخر