جنرل سلیمانی کا قتل اقوام متحدہ کے چارٹر آرٹیکل 51 کے تحت جائز ہے،اقوام متحدہ کیلئے امریکی مندوب کا سلامتی کونسل کو خط

جنرل سلیمانی کا قتل اقوام متحدہ کے چارٹر آرٹیکل 51 کے تحت جائز ہے،اقوام متحدہ ...
جنرل سلیمانی کا قتل اقوام متحدہ کے چارٹر آرٹیکل 51 کے تحت جائز ہے،اقوام متحدہ کیلئے امریکی مندوب کا سلامتی کونسل کو خط

  



نیویارک(ڈیلی پاکستان آن لائن)امریکا نے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی پرحملہ دفاعی اقدام قرار دےدیا،اقوام متحدہ کیلئے امریکی مندوب کیلی کرافٹ نے کہاہے کہ جنرل سلیمانی کا قتل اقوام متحدہ کے چارٹر آرٹیکل 51 کے تحت جائز ہے،ضرورت پڑی تو مشرق وسطیٰ میں اپنے دفاع کیلئے مزید اقدامات اٹھائیں گے۔

میڈیارپورٹس کے مطابق اقوام متحدہ کیلئے امریکی مندوب کیلی کرافٹ نے سلامتی کونسل کو خط میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی پرحملہ دفاعی اقدام قرار دےدیا،کیلی کرافٹ کا کہنا ہے کہ جنرل سلیمانی کا قتل اقوام متحدہ کے چارٹر آرٹیکل 51 کے تحت جائز ہے۔

اقوام متحدہ کیلئے امریکی مندوب کااپنے خط میں کہنا ہے کہ ایران کے ساتھ بغیر کسی شرائط کے سنجیدہ مذاکرات کیلئے تیار ہیں، ضرورت پڑی تو مشرق وسطیٰ میں اپنے دفاع کیلئے مزید اقدامات اٹھائیں گے۔

مزید : اہم خبریں /بین الاقوامی