ایران کی طرف سے نیوکلیئر ڈیل پر عمل نہ کرنے پر برطانیہ بھی میدان میں آگیا

ایران کی طرف سے نیوکلیئر ڈیل پر عمل نہ کرنے پر برطانیہ بھی میدان میں آگیا
ایران کی طرف سے نیوکلیئر ڈیل پر عمل نہ کرنے پر برطانیہ بھی میدان میں آگیا

  



لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن)ایران کی جانب سے ایٹمی ڈیل سے علیحدگی کے فیصلے پر برطانیہ بھی میدان میں آگیا۔برطانوی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ایرانامریکی علیحدگی کے باوجود معاہدے پرمکمل عملدرآمد کرے۔

برطانوی وزیرخارجہ ڈومنیک راب کہتے ہیں کہ ایران کی جانب سے2015 میں ہونے والی ایٹمی ڈیل سے علیحدگی کے بعد وہ اس معاہدے کے مستقبل پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے۔ڈومنیک راب کہتے ہیں کہ امریکی علیحدگی کے بعد دیگر فریق جے سی پی او اے پر متفق ہوئے تھے تاہم ایران کی جانب سے علیحدگی کے حالیہ اقدامات انتہائی شدید ہیں اور آئندہ پیش آنے والے امکانات پر گہری نظر رکھے ہوئے ہیں۔چاہتے ہیں کہ ایران ڈیل پر مکمل عملدرآمد کرے۔

برطانوی وزیراعظم کہہ چکے ہیں کہ خطے میں کشیدگی بڑھنے کے باوجود برطانیہ ڈیل سے امریکی علیحدگی کے بعد قائم ہونے والے جوائنٹ کمپری ہینسو پلان آف ایکشن (جے سی پی او اے) کے ساتھ کھڑا ہے۔رائٹرز کے مطابق سفارتکاروں کا کہنا ہے کہ یورپی قوتیں ابھی بھی اپنے موقف پر سختی سے قائم ہیں جبکہ ایران نے جنرل قاسم سلیمانی کی امریکی حملے میں ہلاکت کے بعد اس سے علیحدگی کااعلان کیاتھا۔

مزید : قومی /عرب دنیا


loading...