ایران امریکہ کشیدگی سے افغان امن عمل متاثر ہوسکتا ہے، وزیر خارجہ نے خبر دار کردیا

ایران امریکہ کشیدگی سے افغان امن عمل متاثر ہوسکتا ہے، وزیر خارجہ نے خبر دار ...
 ایران امریکہ کشیدگی سے افغان امن عمل متاثر ہوسکتا ہے، وزیر خارجہ نے خبر دار کردیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ ایران امریکہ کشیدگی سے افغان امن عمل متاثر ہوسکتا ہے ،وزیر اعظم کا گزشتہ روز کا بیان بہت اہم اوردو ٹوک تھا ، واضح طور پر کہہ دیا ہے کہ ہماری سرزمین کسی کے خلاف استعمال نہیں ہوسکتی۔

تفصیلات کے مطابق قائمہ کمیٹی کے اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ حالات خراب ہوئے تواثر ات پورے خطے پر پڑیں گے ، ایران امریکہ کشید گی کم کروانے کے لئے رابط جاری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں خطے کے تمام ممالک کے وزرائے خارجہ سے رابطے کررہا ہوں، ایران کے وزیر خارجہ سے گفتگو بہت مفیدرہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایران امریکہ کشیدگی سے افغان امن عمل متاثر ہوسکتا ہے ۔وزیر اعظم کا گزشتہ روز کا بیان بہت اہم اوردو ٹوک تھا ، واضح طور پر کہہ دیا ہے کہ ہماری سرزمین کسی کے خلاف استعمال نہیں ہوسکتی۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بھارت میں مسلمانوں کے حقوق سلب کرنےکی کوشش کی گئی، اوآئی سی نے بھارتی امتیازی قوانین کیخلاف ردعمل دیا ہے۔ مسلم امہ کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں ، مزید بہتر بنانا چاہتے ہیں۔ فروری میں وزیر اعظم عمران خان ملائیشیاکادورہ کریں گے اور ترک صدرآئندہ ماہ پاکستان آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ مشرق وسطیٰ سے متعلق پاکستان کے موقف کوسراہاگیاہے ۔ پاک سرزمین کسی ملک کیخلاف استعمال نہیں ہوگی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان سی پیک کے دوسرے مرحلے پر عمل در آمد کیلئے پرعز م ہے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی