جنوبی پنجاب، سردی بڑھ گئی، بچوں پر مختلف بیماریوں کا حملہ، ہسپتالوں میں رش، سہولیات زیرو

  جنوبی پنجاب، سردی بڑھ گئی، بچوں پر مختلف بیماریوں کا حملہ، ہسپتالوں میں ...

  

  ملتان (خصوصی رپو رٹر) ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں شدید سردی کے باعث بچے بیمار پڑنے لگے، روزانہ کی بنیاد پر ملتان سمیت  جنوبی پنجاب سے بڑی تعداد میں بچے نزلہ کھانسی اور زکام مبتلا  ہو کر چلڈرن کمپلیکس اور نشتر ہسپتال میں رپورٹ ہونے لگے نشتر ہسپتال میں نوزائیدہ بچوں کے صرف دو وارڈز بستروں کی شدید کمی، چلڈرن کمپلیکس کی ایمرجنسی بھی بھر گئی طبی ماہرین نے بچوں کو سردی سے محفوظ رکھنے اور احتیاط برتنے  (بقیہ نمبر15صفحہ6پر)

کی ہدایات جاری کر دی - تفصیلات کے مطابق  ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں شدید سردی کی لہر جاری ہے، جس کی وجہ سے بڑوں کے ساتھ ساتھ بچے بھی شدید متاثر ہو رہے ہیں - سردی لگنے سے بیمار ہونے والے بچوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے روزانہ کی بنیاد پر ملتان سمیت جنوبی پنجاب اندرون سندھ بلوچستان اور کے پی سے بڑی تعداد میں بچے  چلڈرن کمپلیکس اور نشتر ہسپتال میں  رپورٹ ہو رہے ہیں  جن میں سے 60 فیصد سے زائد بچے سردی کی وجہ سے نزلہ زکام کھانسی یا چیسٹ انفیکشن کے ساتھ آ رہے ہیں جبکہ نشتر ہسپتال میں امراض اطفال میڈیسن کے صرف دو وارڈز میں 80 کے لگ بھگ بسترے موجود ہیں جو کہ اتنی بڑی تعداد میں رپورٹ ہونے والے بچوں کے لئے نہایت کم ہیں ادھر چلڈرن کمپلیکس سے بھی اکثر بچوں کو جگہ کی کمی کے باعث نشتر ہسپتال ریفر کئے جانے کا سلسلہ جاری ہے جس کے باعث لواحقین نشتر ہسپتال اور چلڈرن کمپلیکس کے درمیان شٹل کاک بن چکے ہیں ادھر طبی ماہرین ڈاکٹر ساجد اختر ڈاکٹر نصرت بزدار ڈاکٹر جواد اود دیگر نے بچوں کے والدین کو ہدایت کی ہے کہ بچوں کو سرد ہوا نہ لگنے دیں، کھلے صحن میں نہ کھیلنے دیں، خصوصا رات کے اوقات میں سردی سے بچائیں تاکہ بچے بیمار نہ پڑیں کمروں میں بھی گرم کپڑوں کا استعمال لازمی کریں اور ابلے ہوئے پانی کا استعمال زیادہ سے زیادہ کروائیں۔

انکشاف

مزید :

ملتان صفحہ آخر -