رمضان المبارک میں عو ام کو ناجائز منافع خوروں کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑیں گے ،حمزہ شہباز شریف

رمضان المبارک میں عو ام کو ناجائز منافع خوروں کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑیں گے ...

  



                                    لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما و رکن قومی اسمبلی حمزہ شہباز شریف نے کہا کہ رمضان المبارک کے دوران اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور معیار پرسختی سے عملدرآمد کرایا جائے۔ اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور کوالٹی پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔ عوام کو ریلیف کی فراہمی میں کوئی سستی یا کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی ۔ رمضان بازاروں مےں اشےائے ضرورےہ کی سستے داموں فراہمی کے لئے جامع مےکانزم وضع کےا گےا ہے اور معےاری اشےائے ضرورےہ کی مناسب قےمتوںپر فراہمی کو ےقےنی بنانے کے لئے انتظامےہ اور منتخب نمائندوں کو بھی ہداےت کی گئی ہے۔ عوام کو ناجائز منافع خوروں کے رحم و کرم پر نہےں چھوڑےں گے۔ اس امر کا اظہا ر انہوں نے ماڈل ٹاﺅن آفس میں رمضان بازاروں کے حوالے سے منعقدہ ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں رکن قومی اسمبلی پرویز ملک، خواجہ احمد حسان، ایم پی ایز خواجہ عمران نذیر، چودھری شہباز، ڈی سی او اور دیگر نے شرکت کی ۔ حمزہ شہباز شریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ رواں سال رمضان المبارک کے موقع پروزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف نے صوبے کے عوام کو رمضان المبارک کے دوران ریلیف فراہم کرنے کے لئے ملک کی تاریخ کے سب سے بڑے رمضان پیکیج کا اعلان کیاہے جس کے تحت عوام کوسستے آٹے کی فراہمی پر 5ارب روپے کی سبسڈی دی گئی ہے - رمضان بازاروں میں سبزیوں ، پھلوں اور اشیائے ضرورےہ کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا اوراس ضمن میںمعیاری اشیائے ضرورےہ کی وافر مقدار میں فراہمی کے لئے سیاسی و انتظامی مشینری فعال اور متحرک کردار ادا کرے گی تاکہ عوام کوہر صورت رمضان پیکیج کے ثمرات بہم پہنچ سکیں-انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ کی ہدایت کے مطابق صوبہ بھر میں سحری اور افطاری کے اوقات میں 2ہزار مدنی دستر خوان لگائے گئے ہیں جہاں پر عوام کو سحری اور افطاری کی مفت سہولت فراہم کی جا رہی ہے -مدنی دستر خوان کا انتظام کرنے والے مخیرحضرات دین اور دنیا دونوں کما رہے ہیں- پنجاب حکومت مدنی دسترخوانوں کے حوالے سے ہر ممکن تعاون فراہم کرے گی-انہوں نے ہدایت کی کہ رمضان بازاروںمیں صفائی ستھرائی اور سیکورٹی کے انتظامات کو فول پروف بنایا جائے اس ضمن میں کسی قسم کی غفلت برداشت نہیں کی جائے گی- حمزہ شہباز شریف نے کہا کہ اشیائے ضرورےہ کی زائد نرخوں پر فروخت کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی۔انتظامیہ عوام کو اشیائے ضرورےہ کی مقررہ نرخوں پر فراہمی ہر صورت یقینی بنائے۔ متعلقہ حکام،مارکیٹوں کے باقاعدگی سے دورے کریں اور مقررہ نرخوں پر اشیائے ضرورےہ کی فروخت یقینی بنائیں۔کسی علاقے سے زائد نرخوں پراشیائے ضرورےہ کی فروخت کی شکایت ملی تو ذمہ داروں کو معاف نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس امر کو یقینی بنایا جائے کہ سستے رمضان بازار کے آغاز سے اختتام تک دکاندار مقررکردہ نرخ پر ہی اشیاءفروخت کریں اور قیمتوں کے کارڈ نمایاں طور پر آویزاں کریں-حمزہ شہباز نے کہا کہ وزیراعلی محمد شہباز شریف کی طرف سے صوبے کے مختلف علاقوں میں قائم ان رمضان بازاروں اچانک دورے سے یہ پیغام ملا ہے کہ ملک کے سب سے بڑے صوبے کے وزیراعلی عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لئے سرگرم عمل ہیں اور روزے اور سخت گرمی کی حالت میں رمضان بازاروں کے دورے کرکے عوام کو اشیائے ضروریہ کی مناسب نرخوں پر فراہمی یقینی بنانے کے لئے کوشاں ہیںان کے علاوہ رمضان بازاروں کی اچانک چیکنگ کے لئے تمام صوبائی سیکرٹریز کی بھی ڈیوٹیاں لگائی گئی ہیں-رمضان بازاروں پر اشیائے خوردونوش کے معیار اورنرخ کی چیکنگ پر 1110مجسٹریٹ کو مامور کیا گیا ہے جو رمضان بازاروں میں بے قاعدگی کرنے والے دکانداروں پر کڑی نظر رکھیں گے-واضح رہے کہ رمضان المبارک کے دوران صوبہ بھر مےں 346رمضان بازار لگائے گئے ہیں۔رمضان بازاروںمےں 346زرعی فےئر پرائس شاپس لگائی گئی ہیں جہاں سبزےاں اورپھل سستے داموں دستےاب ہیں جبکہ صوبہ بھر مےں 2ہزار مدنی دسترخوان لگانے کے انتظامات بھی کئے گئے ہیں ۔ رمضان بازاروں مےں اشےائے ضرورےہ ،سبزےوں اور پھلوں کی سستے داموں وافر فراہمی کو ہر صورت یقینی بنایا گیا ہے جبکہ رےٹ لسٹےں نماےاں طورپر آوےزاں ہیں۔رمضان المبارک کے دوران ماڈل بازاروں کے سٹال مالکان سے کوئی فےس وصول نہےں کی جارہی۔ صوبائی وزراءاور سےکرٹری صاحبان نے رمضان بازاروں کے دور ے کر رہے ہیں اور اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور کوالٹی کی مانیٹرنگ کرکے روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ وزیراعلی پنجاب کو پیش کی جارہی ہے ۔رمضان بازاروں مےں شہرےوں کی شکاےات کے ازالے کے لئے ڈےجےٹل نظام وضع کرلےا گےا ہے ۔ شہری ٹال فری نمبر 0800-02345پر فون کر کے شکاےات درج کراسکتے ہےں-

حمزہ شہباز

مزید : صفحہ آخر


loading...