امریکہ :عام لیبارٹری سے سمال پوکس وائرس کے نمونے ملنے کا انکشاف

امریکہ :عام لیبارٹری سے سمال پوکس وائرس کے نمونے ملنے کا انکشاف
 امریکہ :عام لیبارٹری سے سمال پوکس وائرس کے نمونے ملنے کا انکشاف

  



 نیویارک( ما نیٹرنگ ڈیسک ) امریکہ میں نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ہیلتھ کی لیبارٹری سے جان لیوسمال پوکس وائرس کے 60 سال پرانے سیمپلز ملے ہیں جس نے ادارے کے حکام کی غیر ذمہ داری کا پول کھول دیا۔تفصیلات کے مطابق ایک عالمی معاہدے کے مطابق سمال پوکس وائرس کے سیمپل صرف اٹلانٹا کی انتہائی محفوظ لیب یا پھر روس کے بائیوٹیکنالوجی ریسرچ سینٹر میں ہی سٹور کیے جاسکتے ہیںلیکن یہ پہلی بار ہے کہ ایسے جان لیو سیمپلز ان دو اداروں کے علاوہ کہیں اور سے ملے ہوں۔امریکی اخبار کی رپورٹ کے مطابق چھوٹی چھوٹی 6 شیشیوں میں بند سمال پوکس کے یہ سیمپلز امریکہ کی فیڈرل ہیلتھ ایجنسی کے سٹوریج روم میں رکھے تھے ، تقریباً 60 سال پرانے ان سیمپلز میں سمال پوکس وائرس ڈی این اے کی موجودگی کی تصدیق ہوگئی ہے ۔ان کے فعال ہونے یا نہ ہونے کا پتہ مزید تحقیق سے لگایا جائے گا۔

مزید : بین الاقوامی


loading...