سٹویاکے پودے کی بڑھوتر ی کیلئے 30 ڈگر ی در جہ حرارت موزوں ہے:زرعی ماہرین

سٹویاکے پودے کی بڑھوتر ی کیلئے 30 ڈگر ی در جہ حرارت موزوں ہے:زرعی ماہرین

  



سرگودھا (اے پی پی)زرعی ماہرین نے کہاہے کہ سٹویا کے پتوں کو پراسیسنگ کے بعدکمرشل بنیادوں پر ساشے بناکر فراہم کرنے سے چائے میں ا س کا استعما ل آسانی سے کیا جاسکے،سٹویاایک کثیر الفوائد ادویاتی پود اہے، ا س کے پتے چینی سے 10سے 15گنازیادہ میٹھے ہوتے ہیں اور ا س کا عرق چینی سے 200سے 300گنا زیاد ہ میٹھا ہوتا ہے ۔ زرعی ماہرین نے مزید بتایا کہ سٹویاکی ایک ایکڑ سے پہلی کٹائی میں 18سے 22من تک خشک پتے حاصل کیے جاسکتے سٹویا کوکچن گارڈننگ کے طورپر اگایا جاسکتا ہے خون میں شوگر کی مقدار اوربلڈ پریشر کوکم کرتا ہے۔

 سٹیویا کے گلائیکوسائیڈ سرطان کی ادویات بنانے میں استعمال ہوتے ہیں ا س میں کیلشیم کی کافی مقدار ہونے کی وجہ سے عورتوں اوربچوں کی ہڈیوں کی نشوونماکیلئے مفیدہے سٹیویا کوکاشت کرنے کیلئے ا س کی نرسر ی تیار کرنا پڑتی ہے نرسر ی بیج قلم اور ٹشو کلچر سے تیار کی جاسکتی ہے بیج سے تیارکر د ہ پود ے 2ماہ بعد جبکہ قلم اور ٹیشوکلچر سے کا شت کرد ہ پو د ے 1ماہ بعد کھیت میں منتقل کرنے کے قابل ہوجاتے ہیں کیونکہ سٹویا کے بیج کے شرح اگاﺅ بہت کم ہوتا ہے ا س لیے قلم کے ذریعے اس کی افزائش کی جا ئے ا س کیلئے پو دے کا اوپر والا 4انچ حصہ کاٹ کر پلاسٹک کے کپ میں موجود مٹی میں لگا کر پانی کا چھڑ کاﺅکریں قلمیں لگانے کے بعد پلاسٹک کے لفافے سے اچھی طرح ڈھانپ دیں اورپودے تیارہونے تک کھیت میں منتقل کریں پود ے کی بڑھوتر ی کیلئے 30ڈگر ی سینٹی گریڈ در جہ حرارت موزوں ہے ۔

مزید : کامرس


loading...