ہائی کورٹ نے کالعدم تنظیم کے سربراہ غلام رضا نقوی کو عبوری ضمانت پر رہا کردیا

ہائی کورٹ نے کالعدم تنظیم کے سربراہ غلام رضا نقوی کو عبوری ضمانت پر رہا کردیا
ہائی کورٹ نے کالعدم تنظیم کے سربراہ غلام رضا نقوی کو عبوری ضمانت پر رہا کردیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (نامہ نگار خصوصی ) لاہو رہائیکورٹ نے کالعدم تنظیم سپاہ محمد کے سربراہ علامہ سید غلام رضا نقوی کی 14 جولائی تک عبوری ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں 5، 5لاکھ روپے کے 3 ضمانتی مچلکوں کے عوض رہا کرنے کا حکم دے دیاہے جبکہ درخواست گزار کوضمانت کی توثیق کے لئے انسداد دہشت گردی کی عدالت سے رجوع کی ہدایت کی ہے۔ مسٹر جسٹس محمد انوار الحق کی سربراہی میں قائم ڈویژن بنچ کے روبرو کالعدم تنظیم سپاہ محمد کے سربراہ کی بازیابی کے لئے ابو تراب نقوی کی جانب سے دائر کی گئی درخواست پر سماعت شروع ہوئی تو کاونٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے انسپکٹر سردار علی نے کالعدم تنظیم سپاہ محمد کے سربراہ علامہ سید غلام رضا نقوی کو عدالت میں پیش کیا ، انہوں نے عدالت کو بتایا کہ غلام رضا نقوی کے خلاف کالعدم تنظیم کی سرگرمیوں میں حصہ لینے ، انسداددہشت گردی کی عدالت سے سزا یافتہ افراد سے روابط رکھنے اور امن تباہ کرنے کے الزامات کے تحت مقدمہ درج کیا جا چکا ہے، ڈپٹی پراسکیوٹر جنرل نے عدالت کو بتایا کہ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کیا جا چکا ہے لہٰذا ملزم کو ٹرائل کورٹ سے رجوع کرنے کا حکم دیا جائے، درخواست گزار ابو تراب نقوی کی جانب سے خرم لطیف کھوسہ ایڈووکیٹ نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ ان کے موکل پر لگائے جانیوالے الزامات بے بنیاد ہیں لہذا ضمانت منظور کی جائے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل درخواست گزار کے وکیل کی استدعا پرفاضل بنچ نے بازیابی کے لئے دائر رٹ پٹیشن کو درخواست ضمانت میں تبدیل کرنے کا حکم دیا تھا۔

مزید :

لاہور -