, بھارت کشمیر کو متنازعہ, تسلیم کرے تو بات چیت, کیلئے تیار ہیں‘متحدہ جہاد کونسل کا اعلان,

, بھارت کشمیر کو متنازعہ, تسلیم کرے تو بات چیت, کیلئے تیار ہیں‘متحدہ جہاد ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

مظفر آباد (کے پی آئی)کشمیر میں سرگرم عسکری تنظیموں کے مشترکہ پلیٹ فارم متحدہ جہاد کونسل نے واضح کیا کہ بھارت کے ساتھ مذاکرات کرنے میں کوئی حرج نہیں تاہم اس کیلئے شرط ہے کہ وہ کشمیر کو متنازعہ مسئلہ تسلیم کرے۔متحدہ جہاد کونسل کے جنرل سیکریٹری شیخ جمیل الرحمان نے کہاہم صرف لڑنا اور مارنا ہی نہیں جانتے ہیں بلکہ ہم اپنے اہداف کے حصول کیلئے تما م مثبت اقدامات کیلئے بھی تیار ہیں۔اگر بھارت کشمیر کو بین الاقوامی ضمانت کے ساتھ تنازعہ تسلیم کرکے متحدہ جہاد کونسل کو مذاکرات کی توہم بامعنی مذاکرات میں شامل ہونے کیلئے تیار ہیں مظفر آباد میں اخبار نویسوں سے بات چیت کرتے ہوئے جمیل الرحمان نے تاہم اس بات پر افسوس کااظہار کیا کہ بھارت متعلقین ،چاہئے وہ عسکری جماعتیں،مزاحمتی قیادت یا حکومت پاکستان ہو ،کے ساتھ بامعنی مذاکرات کرنے میں کبھی سنجیدہ اور پر خلوص نہیں تھا۔ انہوں نے کہاہمیں بھارت کی ڈبل گیم پر قریبی نگاہ رکھنی چاہئے۔سابق را چیف کے الزامات کے جواب میں جمیل الرحمان نے کہایہ آزاد پسند قیادت کی ساکھ کی ناکام کوشش تھی اور بھارت مایوسی کے عالم گزشتہ کافی عرصہ سے ایسی کوششیں کرتا آرہا ہے۔جمیل نے کہاچونکہ کشمیری عوام اس جھوٹی پروپگنڈا مہم کے پس پردہ اغراض ومقاصد سے مکمل طور آگاہ ہیں ،لہذا اس سے لوگ گمراہ نہیں ہونگے۔
انہوں نے کہا کہ ایک ایسی صورتحال میں جب کشمیری بھارت کے خلاف بر سر جنگ ہیں،کشمیریوں کی قربانیوں کی قیمت پر دشمن کے ساتھ مفاہمت ناممکن ہے۔انہوں نے کہاہماری سیاسی و عسکری قیادت باکردار ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر میں تحریک ایک نظریاتی تحریک ہے اور اس کا دنیاوی فوائد کے ساتھ کوئی لینا دینا نہیں ہے۔انہوں نے کہارا کی اس مزموم مہم کا ایک مقصد کشمیری عوام میں انتشار پیدا کرنا ہے ،ہمارادشمن ہمارے اور عوام کے درمیان غلط فہمی پیدا کرنے میں لگا ہوا ہے ،تاہم ہمیں اس منصوبہ کو ناکام بنانا ہوگا۔جمیل الرحمان نے مزید کہاپاکستانی سیاستدانوں کو بھی سمجھنا چاہئے کہ کشمیر کی تحریک کشمیریوں کی آنے والی نسلوں کے مستقبل کو محفوظ بنانے کی تحریک ہے ،لہذا پاکستان کیلئے اس تحریک کی حمایت کرنا لازمی ہے،۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہابھارت آئی ایس آئی اور کشمیری عسکریت پسندوں کو ان چیزوں کیلئے ذمہ دار ٹھہرانے کا عادی بن چکا ہے جن کا ان کے ساتھ دور کا بھی کوئی واسطہ نہیں ہوتا ہے تاہم پاکستان اپنے ملک میں نہ رکنے والی دہشت گردانہ کارروائیوں میں بھارت کے ہاتھ کو بے نقاب نہیں کرتا ہے ۔ان کا کہناتھاپاکستان کو اپنے عوام اور بین الاقوامی برادری کو پاکستانی سرزمین پر را کی سرگرمیوں سے متعلق آگاہ کرنا چاہئے۔

مزید :

عالمی منظر -