مشرف سیاست میں آنے کا خواب دیکھنا چھوڑ دیں، عبدالرشید قریشی

مشرف سیاست میں آنے کا خواب دیکھنا چھوڑ دیں، عبدالرشید قریشی

لاہور (پ ر) عبدالرشید قریشی چیئرمین عدلیہ بچاؤ کمیٹی نے سابق صدر پرویز مشرف کے اس بیان پر کہ وہ سیاست میں آ کر ملک و قوم کی خدمت کرنا چاہتے ہیں تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ بندوق کے زور پر گیارہ سال تک پاکستان کے سیاہ و سفید کے مالک رہ چکے ہیں آتے ہی انہوں نے احتساب کا نعرہ لگایا تھا لیکن قابل احتساب افراد کو اپنی حکومت میں شامل کر لیا۔ انہوں نے اپنے سیاسی مخالف الشاہ احمد نور انی کو ہسپتال میں ڈاکٹروں سے مل کر مروا دیا۔ نوابزادہ نصر اللہ خان کو نام نہاد سیاسی کارکن منیر احمد کے ذریعے جو 2003ء میں نو ابزادہ نصر اللہ خان کو لندن سے لے گیا اور وہاں دور ان قیام نوابزادہ نصر اللہ خان کو دیر سے اثر کرنے والا زہر دیا گیا۔ مشرف نے اکبر بگٹی کی رہائش گاہ پر فوجی کمانڈوز سے حملہ کرایا 2007ء میں وکلاء نے تحریک چلائی کراچی ڈرگ روڈ پر تقریباً 50 افراد کو گولیوں سے چھلنی کر دیا ۔ پاکستان میں ہر متحرک وکیل اور سیاسی کارکن کو جیل بھجوا دیا ایم کیو ایم کے ذریعے وکلاء کے چیمبر جلوائے رشید قریشی نے پرویز مشرف کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے گناہوں کی معافی مانگیں اور سیاست میں آنے کا خیال ہمیشہ کے لئے اپنے ذہن سے نکال دیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4