معروف ہدایتکار یونس ملک حرکت قلب بند ہونے سے انتقال کر گئے

معروف ہدایتکار یونس ملک حرکت قلب بند ہونے سے انتقال کر گئے
 معروف ہدایتکار یونس ملک حرکت قلب بند ہونے سے انتقال کر گئے

  


لاہور(فلم رپورٹر )’’مولا جٹ‘‘ فیم فلم انڈسٹری کے معروف ہدایتکاریونس ملک دل کادورہ پڑنے سے انتقال کرگئے ۔مرحوم کی نمازجنازہ آج صبح آٹھ بجے دربارشاہ ابوالمعالی پراداکی جائے گی ۔ان کی انتقال کی خبرملتے ہی فلم انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے لوگ تعزیت کے لئے ان کے آبائی گھرگوالمنڈی پہنچ گئے۔مرحوم کے پسماندگان میں ایک بیوہ چاربیٹے اورپانچ بیٹاں شامل ہیں۔ یونس ملک کی بطورہدایتکارپہلی فلم ’’جیراسائیں‘‘21جولائی 1977ء کوریلیزہوئی ۔مرحوم کے استاد ڈائریکٹر افتخار خان تھے ۔تاہم 1979ء میں ریلیزہونے والی فلم ’’مولاجٹ ‘‘نے ملک بھرمیں تہلکہ مچادیااوروہ راتوں رات شہرت کی بلندیوں پرپہنچ گئے ۔اس کے بعد ان کے زیرہدایت بننے والی فلم کوکامیابی کی ضمانت سمجھاجاتاتھا۔انہوں نے بطورفلمساز’’شیرخان ‘‘سمیت کئی فلمیں بنائیں۔انہوں نے اداکارہ نادرہ اورنیلی سمیت کئی اداکاراؤں کومتعارف کرایا۔یونس ملک نے کیرئیرمیں36فلموں کی ڈائریکشن دی ۔وہ گزشتہ چند برس سے دل کے عارضے میں مبتلاتھے ۔گزشتہ روزہونے والا اٹیک جان لیواثابت ہوا۔مرحوم کی یادگارفلموں میں’’جٹ ان لندن،گوگاشیر،ضدی جٹ ،خان اعظم ،جٹ داویر،دوبیگہ زمین ،شعلے،جرنیل سنگھ ،آخری جنگ ‘‘اوردیگرشامل تھیں۔ان کی آخری فلم ’’عشق زندہ روے گا‘‘چاربرس قبل ریلیزہوئی ۔ پرویز کلیم ، جونی ملک،چوہدری اعجاز کامران ،ذوالفقار مانا،سید فیصل بخاری،عرفان کھوسٹ ،سہیل خان،مصطفےٰ قریشی،غلام محی الدین،جرار رضوی،اچھی خان،ارباز خان،سعود ،معمر رانا،شیبا بٹ ،دردانہ رحمان ،شاہدہ منی،ماہ نور،آفرین،سدرہ نور،ندا چوہدری،خوشبو اور دیگر نے مرحوم کے انتقال پرگہرے دکھ کااظہارکیاہے ۔

مزید : صفحہ آخر