اقبال ٹاﺅ ن بینک میں فائرنگ کرنےوالا شخص مبینہ پولیس مقابلے میں مارا گیا

اقبال ٹاﺅ ن بینک میں فائرنگ کرنےوالا شخص مبینہ پولیس مقابلے میں مارا گیا
اقبال ٹاﺅ ن بینک میں فائرنگ کرنےوالا شخص مبینہ پولیس مقابلے میں مارا گیا

  


لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)اقبال ٹاﺅن کے علاقے کریم بلاک میں واقع نجی بینک میں فائرنگ کرنے والا شخص عبداللہ شیر ا کوٹ کے علاقے میں مبینہ پولیس مقابلے میں ماراگیا ۔تفصیلات کے مطابق پولیس نے عبداللہ کو موقع سے گرفتار کر کے اس کی نشاندہی پر جس شخص سے اس نے اسلحہ خریدا ،اسے گرفتار کرنے کیلئے شیراکوٹ کے علاقے میں گئے جہاں ملزم نے مبینہ طورپر اسلحہ چھین کر فرار ہونے کی کوشش کی جس دوران فائرنگ کا تبادلہ ہوا اورعبداللہ گولی لگنے سے ہلاک ہو گیا ۔

واضح رہے کہ اقبال ٹاﺅ ن میں واقع نجی بینک میں فائرنگ کے دوران بینک آپریشن منیجر سمیت تین افراد جاں بحق جبکہ چار افراد زخمی ہوئے ہیں ،سائنس کالج کے پرنسپل بھی حراست میں ہیں۔

سی سی پی او لاہور امین وینس کا کہنا ہے کہ واقعہ بینک ڈکیتی کا نہیں بلکہ ذاتی دشمنی کا لگتاہے کیونکہ سی سی ٹی وی فوٹیج دیکھنے کے بعد معلوم ہواہے کہ ملزم نے بینک کے اندر داخل ہوتے ہی ایک ہی آدمی کو ٹارگٹ کیا جس سے واضح ہوتاہے کہ معاملہ ذاتی دشمنی کاہے ۔

گرفتار ہونے والا ملزم عبداللہ سائنس کالج کا کیشیئر ہے اورا س نے بینک سے پرنسپل کے جعلی دستخط کرکے بینک سے 25لاکھ روپے نکلوائے تھے جس کا علم آپریشن منیجر کو ہو گیاہے جس پر ملزم عبداللہ نے اسے دھمکیاں بھی دیں اور اسے کارروائی کرنے سے متعلق باز رہنے کا کہا جس پر آپریشن منیجر نے انکار کر دیا ۔

واقعہ کی خبر ملتے ہی سائنس کالج کے پرنسپل زاہد بٹ بھی موقع پر پہنچ گئے جہاں انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کیشیئر عبداللہ بے قصور ہے ،اس کی والدہ کی پنشن بھی یہاں ہی آتی ہے اور ہو سکتاہے کہ وہ والدہ کہ پنشن لینے آیا ہو ،وہ کسی ڈکیتی کی واردات میں ملوث نہیں ہوسکتاہے ۔میڈیا سے گفتگو کے بعد پولیس نے سائنس کالج کے پرنسپل زاہد بٹ کو بھی حراست میں لے لیا او ر انہیں بھی مزید تفتیش کیلئے تھانہ منتقل کر دیاہے ۔

ملزم نے بینک میں داخل ہو کر فائرنگ شروع کردی تھی جس کے باعث ناصر اور خالد سمیت آپریشن منیجر موقع پر ہی جاںبحق ہو گیا جبکہ بینک میں داخلے پر گارڈ نے چیکنگ کے لیے اسے روکا تو اس نے داخلے سے قبل ہی گارڈ کو بھی فائر کر کے زخمی کر دیا ،ملزم نے جب واردات کے بعد موقع سے فرار ہو نے کوشش کی تو زخمی گارڈ نے ملزم کو پکڑ لیا اور جس کے باعث وہ زخمی ہو گیا تاہم موقع پر موجودافراد نے ملزم کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور اسے جلانے کی بھی کوشش کی لیکن پولیس کی مداخلت سے ملزم کو حراست میں لے لیا تھا۔

مزید : لاہور /اہم خبریں