ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث این جی اوز کے سینکڑوں افراد کو ڈی پورٹ کیا گیا :چودھری نثار علی

ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث این جی اوز کے سینکڑوں افراد کو ڈی پورٹ کیا گیا ...
ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث این جی اوز کے سینکڑوں افراد کو ڈی پورٹ کیا گیا :چودھری نثار علی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار علی نے کہا ہے کہ غیر رجسٹرڈ این جی اوز پاکستان مخالف سرگرمیوں میں ملوث ہیں ،این جی اوز کے لبادے میں ہزاروں افراد پاکستان داخل ہوئے، ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث این جی اوز کو امریکہ کی حمایت حاصل تھی ،امریکہ کا دباﺅ قبول کرتے تو امریکی این جی او کو بند نہ کرتے ۔ سینٹ میں اظہار خیال کرتے ہوئے وزیر داخلہ چودھری نثار علی نے کہا کہ سیو دی چلڈرن وزارت داخلہ کے احکامات پر سیل نہیں ہوئی ،انٹرنیشنل این جی اوز کی سکیورٹی کلیئرنس کا فیصلہ وزارت داخلہ کرتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جنوری میں امریکی این جی او کو سیل کیا گیا ،امریکہ کا دباﺅ قبول کرتے تو امریکی این جی او کو بند نہ کرتے ،امریکی این جی اوز کے سارے ملازمین واپس بھیج دیئے گئے ، امریکہ کا سیو دی چلڈرن سے متعلق کوئی پریشر نہیں، امریکہ یا کسی دوسرے ملک کا پریشر ہوتا تو ہم اقوام متحدہ نہ جاتے ۔چودھری نثار علی نے کہا کہ سینکڑوں این جی اوز پاکستان کی ترقی میں اہم کردار ادا کر رہی ہیں، ایسی این جی اوز کا سارا ریکارڈ شفاف ہے ، پیسہ کہاں سے آتا ہے کدھر جاتا ہے سب قانونی ہے ۔تاہم مخصوص این جی اوز ملک مخالف سرگرمیوں میں ملوث ہیں ،ملک دشمن سرگرمیوں میںملوث این جی اوز کے سینکڑوں غیر ملکی کارکنوں ڈی پورٹ کیا گیا ۔انہوں نے کہا کہ دو افریقی این جی اوز پاکستان میں غلط سرگرمیوں میں ملوث ہیں، این جی اوز بلوچستان اور گلگت بلتستان میں بھی غلط کاموں میں مصروف ہیں،ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث این جی اوز کو امریکہ کی حمایت حاصل تھی ۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ سیو دی چلڈرن کو قانون کے مطا بق سیل کیا گیا تھااین جی اوز کے لبادے میں ہزاروں افراد پاکستان آئے ۔انہوں نے کہا اکثر این جی اوز رجسٹرڈ ہیں ،بدقسمتی کی بات ہے کہ متعدد این جی اوز نے رجسٹریشن نہیں کروائی جو رجسٹرڈ نہیں انہیں رجسٹریشن کا کہا ہے کہ قانون کے مطابق کام کریں۔چودھری نثار علی نے مزید کہا کہ ڈاکٹرشکیل آفریدی کا معاملہ 4سال پرانا ہے ۔