یوم علیٰ ؓ کا مرکزی جلو س اختتام پذیر

یوم علیٰ ؓ کا مرکزی جلو س اختتام پذیر
یوم علیٰ ؓ کا مرکزی جلو س اختتام پذیر

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

بدین(عمران عباس سے )یوم علی ؓ کا مرکزی جلوس آج دن کو شاہنواز چوک سے برآمد ہوکر اپنے مقررہ راستوں سے ہوتا ہوا امام بارگاہ کاشانیئہ زینبیہ پر اختتام پزیر ہوگیا، ملکی حالت کے پیش نظر سیکیورٹی کے کچھ خاص انتظام نہیں کیئے گئے تھے ،ہر امام بارگاہ کی اپنی اسکاﺅٹس نے سیکیورٹی کے فرائض انجام دیئے، شہر کی سے بڑی مرکزی امام بارگاہ کاشانیئہ زینبیہ پر پانچ سے چھ اہلکار اور ایک موبائیل تعینات کی گئی تھی جبکہ مجلس اور جلوس کے دوران پولیس اہلکار کسی کرسی یا چھاﺅں کا سہارا ڈھونڈتے پھرتے رہے، اس کے علاوہ شہر کے دوسری امام بارگاہوں، امام بارگاہ سجادیہ، امام بارگاہ عزاءخانہ زہرا ؑ،امام بارگاہ قصر شاہ نجف کے علاوہ دیگر 15سے زائد چھوٹی امام بارگاہوںاور پڑھوں پر صرف دو ، دو اہلکار تعینات کیئے گئے تھے،جلوس کے دوران رینجرس کی دو موبائلیں بھی پہنچ گئی جو جلوس کے اختتام تک موجود رہیں، امام بارگاہ سجادیہ میں مجلس ِ عزاءدن 11بجے شروع ہوئی جس میں مولانا مدد علی ملاح صاحب نے خطاب کیا،جب کے مرکزی امام بارگاہ میں مولانا ابرارالحسن نے خطاب کیا، مجلس کے اختتام پر جلوس برآمد ہوا جو مرکزی امام بارگاہ شاہنواز چوک سے روانا ہوا، دونوں امام بارگاہوں کے جلوس اور دیگر چھوٹے امام بارگاہوں کے جلوس کے ماتمی اپنے مقررہ راستوں سے ہوتے ہوئے اور نوحہ خوانی کرتے ہوئے غریب آباد چوک پر پہنچے جہاں پر ڈاکٹر مختیارحسین جعفری نے خطاب کیا اور مولاعلی ؑ کی شہادت بیان کی، جس کے بعد جلوس مہران چوک سے ہوتا ہوا پھر واپس مرکزی امام بارگاہ کاشانیئہ زینبیہ شاہنواز چوک پر اختتام پزیر ہوا، بعد میں امام بارگاہ سجادیہ پر تابوب برآمد کرنے کے بعد زنجیر زنی بھی کی گئی اور لنگر تقسیم کیا گیا۔

مزید :

بدین -