حکومتی دعوے دھرے رہ گئے، عید پر بھی بجلی کی لوڈ شیڈنگ جاری

حکومتی دعوے دھرے رہ گئے، عید پر بھی بجلی کی لوڈ شیڈنگ جاری

  

ملتان،راجن پور،بھکر،ڈیرہ غازیخان ، وہاڑی ، گڑھا موڑ،کبیروالا،میلسی،ٹھٹھہ صادق آباد،حیدر آباد تھل،ہیڈراجکاں،شادن لُنڈ(سٹاف رپورٹر، نمائندگان )حکومت کی طرف سے عیدالفطر کے موقع پر تین روز تک بجلی کی لوڈشیڈنگ نہ کرنے کے دعوے غلط ثابت ہوئے اور ملتان کے نواحی علاقوں میں سمیت پورے جنوبی پنجاب میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری رکھا گیا۔ملتان سے سٹاف رپورٹر کے مطابق میپکو کے چاند رات اور عید الفطر پر لوڈشیڈنگ نہ کرنے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے‘ جنوبی پنجاب میں بجلی کے بحران پر قابو نہ پایا جا سکا‘نواحی علاقوں میں عید پر بھی گھنٹوں لوڈشیڈنگ کی گئی جس پر لوگوں نے جھولیاں اٹھا کر بددعائیں دیں ‘ صارفین کے مطابق وزارت پانی و بجلی ہر بار چاند رات اور عید الفطر پر لوڈشیڈنگ نہ کرنے کا ا علان کرتی ہے مگر اس کے باوجود لوڈشیڈنگ کی جاتی ہے ‘ انہوں نے وفاقی حکومت سے صورتحال کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔میپکو سب ڈویژن گارڈن ٹاؤ ن کے شیرشاہ فیڈر کے علاقے میں عید پر بھی وولٹیج کی کمی کا مسئلہ درپیش رہا‘ مکین شدید پریشان ہو گئے ‘بتایا گیا ہے کہ میپکو سب ڈویژن گارڈن ٹاؤن کے شیر شاہ فیڈر کے علاقے میں 100سے بھی کم وولٹیج ہیں جس سے پانی کی موٹریں‘ فریج سمیت الیکٹرانک اشیا نہیں چلتیں ‘ وولٹیج اتنے کم ہیں کہ سٹیبلائز ر بھی کام نہیں کرتے‘ اہل علاقہ نے وزارت پانی و بجلی کے حکام سے مسئلہ حل کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔دریں ا ثناء ہڑپہ کے علاقے مدینہ ٹاؤ ن میں 50کے وی کا ٹرانسفارمر اوور لوڈ ہونے کے باعث آئے روز اڑ جاتا ہے جس کے باعث صارفین پریشان ہیں ‘بار ہا احتجاج کے باوجود مسئلہ حل نہیں ہو ا ‘ صارفین نے میپکو کے چیف ایگزیکٹو سے اپیل کی ہے کہ علاقے میں 50کے وی کی جگہ100کے وی کا ٹرانسفارمر نصب کیا جائے تاکہ اہل علاقہ کو پریشانی سے نجات مل سکے ‘ صارفین کے مطابق ٹرانسفارمر بار بار جلنے سے سرکار کا لاکھوں روپے کا نقصان ہو چکا ہے ‘اتنی رقم میں تو کئی ٹرانسفارمر لگ سکتے تھے۔میپکو ریجن میں چاند رات اور عید الفطر پر بھی بجلی کی ٹرپنگ کا سلسلہ جار ی رہا‘‘ بجلی کی آنکھ مچولی کے باعث عوام کواذیت ہوئی ‘غیر قانونی ڈبل سورس کنکشن والے صارفین بھی عاجز آگئے اور بار بار چینجر کا لیور کھینچنے میں لگے رہے۔اندرون پاک گیٹ عید الفطر پر بھی وولٹیج کی کمی کی شکایات رہیں ‘ محلہ سلامت رائے کے مکینوں نے احتجاج کیا ‘انہوں نے کہا کہ عید پر بھی وولٹیج پورے نہیں ہو سکے جس کے باعث مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔راجن پور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق راجن پور میں سخت گرمی اور حبس زدہ موسم ،شہریوں نے عید ملن پارٹیوں میں شرکت کی بجائے گھروں میں عید منائی عید کے پہلے ،دوسرے اور تیسرے روز شدید گرمی اور حبس رہی جس سے باہر نکلنا محال ہوگیا جس پر شہریوں نے گھروں میں رہنے کو ترجیح دی ۔بھکر سے نامہ نگار کے مطابق پنجگرائیں کا رہائشی اللہ ڈتہ کھوکھر گھر سے 8چک میں رشتے داروں کو ملنے جا رہا تھا کہ 6 چک لنک روڈ پر دربار اوڈنی کے قریب شدید گرمی اور حبس سے بے ہوش ہو کر جان سے چلا گیا ،راہ گیروں نے دیکھ کر پولیس کو اطلاع دی ،تھانہ صدر پولیس نے نعش شناخت کر کے ورثا کے حوالے کرکے ضروری کاروائی شروع کر دی ہے ۔ڈیرہ غازیخان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق حکومت کی طرف سے عوام کو یہ خوش خبری سنائی گئی تھی کہ عید الفطر کے تین روز تک ملک بھر میں بجلی لوڈشیڈنگ نہیں کی جائیگی لیکن حکومتی دعوی دھرے کے دھرے رہ گئے اور عید الفطر کے پہلے روز ہی علی الصبح دو گھنٹے کی لوڈشیڈنگ کر کے عوام کو مایوس اور پریشان کر دیا ، تیسرے روز لوڈشیڈنگ کا یہ سلسلہ صبح سے رات گئے تک جاری رہا اور عوام کو عید الفطر کے موقع پر بھی حکومت کی طرف سے کوئی ریلیف نہ مل سکا۔ وہاڑی سے بیورو رپورٹ اور نامہ نگار کے مطابق عید الفطر کے تینوں ایام میں واپڈا حکام نے اپنی ہٹ دھرمی برقرار رکھتے ہوئے بجلی کی طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری رکھا اور باربار ٹرپنگ اور وولٹیج میں کمی کی وجہ سے صارفین کی مشکلات میں اضافہ ہو نے لگا ۔ عوامی وسماجی اور شہری حلقوں وقار رشید، حمزہ عثمان ، عبدالرحمن ، شہزاد ارشد، ماجد ندیم ، راشد عمران ، محمدشکیل ، محمد اکرام ودیگر نے اجتماج کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ عید الفطر اور ٹرو، مرو کے روز لوڈشیڈنگ کرنے والے واپدا افسران واہلکاران کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے۔گڑھا موڑ سے سپیشل رپورٹر کے مطابق چک شہانہ فیڈر کے چکوک چک لاڑانوالہ ،نواں چوک،46/10.R چک47/10.R چک74/15.L چک73/15.L پر واپڈا اہلکاروں نے عید کے روز بھی بجلی بند رکھی بجلی صارفین ڈاکٹر سجاد ،محمد سعید،محمد عقیل بھٹی،محمد حسن اور مشتاق بھٹی سمیت دیگر نے احتجاج کرتے ہوئے صحافیوں کو بتایا کہ غریب عوام عید کے روز بھی بجلی کے پنکھے کی ہو اکو ترس رہے ہیں جبکہ وزیر اعظم نے احکامات جاری کیئے کہ ماہ صیام میں بلا تعطل بجلی فراہم کی جائے ۔ اہل دیہہ نے اعلیٰ حکام سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔کبیروالا سے تحصیل رپورٹر کے مطابق عید الفطر کے موقع پرب حکو متی اعلا نات کے باوجود کبیروالا شہر اور نواحی علاقوں میں وقفہ وقفہ سے بجلی اور گیس کی غیر اعلا نیہ بندش کا سلسلہ حسب سابق جاری رہا جس دوران اکظر گھروں کے چولہے ٹھنڈے رہے جب کہ علا قہ مکین عید کے پکوانوں سے یکسر محروم رہے مقامی شہریوں نے گیس اور بجلی کی غیر اعلا نیہ لوڈ شیڈ نھ پر شدید احتجاج کرتے متعلقہ حکام کے خلاف کاروائی کا مطا لبہ کیا ہے۔ میلسی سے نمائندہ پاکستان کے مطابق 29رمضان المبارک کی شب9بجے تک ملک بھرکی طرح میلسی کی عوام بھی تذبذب کا شکار تھی کہ صبح عیدہوگی یاروزہ رکھا جائے گا جیسے ہی رویت ہلال کمیٹی نے چاندنظرآنے کا اعلان کرتے ہوئے صبح عیدمنانے کا اعلان کیا خواتین نے عیدکیلئے کھیرکی تیاری شروع کردی مگر بمشکل30منٹ ہی گزرے تھے کہ محکمہ سوئی گیس نے گیس کی فراہمی بند کردی جوکہ ساری رات بند رہی جس کے باعث خواتین کو کھیرپکانے میں شدیددشواری کا سامناکرنا پڑاگیس لوڈ شیڈنگ کی ستائی خواتین نے محکمہ سوئی گیس کے حکام بددعائیں دیتے ہوئے اعلیٰ حکام سے سخت کاروائی کا مطالبہ کیا۔ٹھٹھہ صادق آباد سے نمائندہ پاکستان کے مطابق عید ایام میں بجلی لوڈشیڈنگ نہ کرنے کے دعوں کے باوجود ٹھٹھہ صادق آباد ونواح میں اولڈ مخدوم رشید،علی شیر واہن فیڈرز پر واپڈاسکینڈ جہانیاں کی طرف سے بجلی کی لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری رہا،عیدایام کے دوران غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ سے عوام کو شدید مشکلات کا سامناکرنا پڑا جس کیخلاف عوام نے احتجاج بھی کیا۔حیدرآباد تھل سے نمائندہ پاکستان کے مطابق حیدرآبادتھل کے گر د نواح میں چار رو ز گزرنے کے باوجو د بجلی بند ہے عملہ آتا ہے پولوں اور تاروں کی صورتحال دیکھ کر واپس چلا جاتا ہے پورا علاقہ بند ہونے کی صورتمیں ایس ڈی او دیکھنے تک نہیںآیا اور نہ ہی اضافی عملہ اور نہ ہی گاڑی یا سامان دیا بلکہ اوپر ایس سی جھنگ اور چیف فیسکو فیصل آباد کو رپورٹ بھجوا دی کہ بجلی چالو ہو گئی ہے حالانکہ صرف حیدرآبادتھل شہر اتنے کوشش کے باوجود چالو ہو سکی وہ بھی عوام نے اپنی مدد آ پ کے تحت پول سیدھے کئے اور تاریں کھچیں ہیں اتنے دن گزرنے کے باوجودما ہنی فیڈ باالکل بند پڑا ہے جبکہ اعلی حکام کو رپورٹ بجھوا دی گئی ہے کہ فیڈر چالو ہو چکا ہے۔ہیڈراجکاں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق عیدالفطر کے موقع پر حکومت کی طرف اعلان کے باوجود کہ عید پر لوڈ شیڈنگ بالکل نہیں ہو گی مگر یہ قانون شائد کسی اور علاقوں اور شہروں کے لئے ہو گا ۔ہیڈراجکاں کی عوام کے لئے حکومت کی طرف سے دیا گیا ریلیف بالکل زیرو ثابت ہوا چودہ گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ شدید گرمی اور حبس نے میٹھی عید کو پھیکی عید بنا دی ۔ اور لوگوں کی عید کی نماز بھی بغیر بجلی کے پڑھی۔شادن لُنڈ سے نامہ نگار کے مطابق حکو متی دعو ؤ ں کہ عید کے دنو ں میں بجلی کی لو ڈ شیڈ نگ نہیں کی جا ئے گی جبکہ اس کے بر عکس شادن لُنڈ، کا لا ،کو ٹ مہو ئی فیڈ رز پر بجلی کی لو ڈ شیڈ نگ بدستور جا ری رہی جس سے شہر یو ں کو عید کی تیا ر یو ں میں مشکلا ت کا سا منا رہا مسا جد میں و ضو اور گھرو ں میں پا نی نہ ہو نے سے شہر ی ا ذیت میں مبتلا رہے اور کئی شہر ی عید کی نما ز بھی ادا نہ کر سکے شہر یو ں غلام فر ید ، محمد عثمان، کر یم بخش، محمد عظیم ، خا لد حسین، رب نواز، محمد قا سم ، خا دم حسین، اللہ بخش، ثنا ء اللہ، محمد رفیق، محمد جمیل، حسین بخش، غضنفر عباس و دیگر نے کہا کہ حکو متی دعوے صر ف اعلا نات محدود ہیں عوام کو ریلیف دینے میں نا کام ہو گی ہے ۔

لوڈشیڈنگ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -