ہزاروں سال پرانی قبر دریافت، اندر سے انسانی باقیات کے ساتھ پڑی ایک ایسی چیز مل گئی کہ کھدائی کرنے والوں کے بھی خوف سے پیروں تلے زمین نکل گئی

ہزاروں سال پرانی قبر دریافت، اندر سے انسانی باقیات کے ساتھ پڑی ایک ایسی چیز ...
ہزاروں سال پرانی قبر دریافت، اندر سے انسانی باقیات کے ساتھ پڑی ایک ایسی چیز مل گئی کہ کھدائی کرنے والوں کے بھی خوف سے پیروں تلے زمین نکل گئی

  

تل ابیب(نیوز ڈیسک) شمالی اسرائیل میں بارہ ہزار سال پرانی ایک قبر کی کھدائی کے دوران ایسی اشیاءدریافت ہو گئیں کہ جنہیں دیکھ کر کھدائی کرنے والوں کی آنکھیں پھٹی کی پھٹی رہ گئیں۔

کھدائی کے دوران سڑک کے نیچے سے ایک ایسے جانور کا ہزاروں سال پرانا ڈھانچہ دریافت جس کا ذکر آج سے پہلے صرف افسانوں میں تھا، جان کر آپ بھی دیکھتے رہ جائیں

اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق ہیبرو یونیورسٹی آف یروشلم کے ماہرین آثارقدیمہ نے بارہ ہزار سال قبل دفن کی گئی ایک خاتون کی قبر کھولی تو خاتون کی ہڈیوں کے ساتھ گائے کی دم ، سور کی ٹانگ ، تیندوے کا پیڑو ، عقاب کے پر اور سب سے خوفناک چیز ایک انسانی پاﺅں بھی موجود تھا۔ ان تمام اشیاءکو لاش کے اردگرد رکھ کر اس کے اوپر سینکڑوں گونگھے ، کچھوے کے 86 خول ، اور ہرن کی ہڈیوں کی تہیں بنائی گئی تھیں۔

ماہر آثار قدیمہ پروفیسر لورڈ گراسمن کا کہنا تھا کہ خاتون کے ڈھانچے کے اردگرد ملنے والی ہڈیوں کے طویل تجزیے اور تحقیق کے بعد ان کی اصل نوعیت کا اندازہ لگایا گیا ہے۔ انھوں نے خیال ظاہر کیا کہ یہ خاتون کوئی جادو گرنی تھی اور اس کے پیروکار سمجھتے تھے کہ یہ جانوروں سے بھی کلام کر سکتی تھی اور اسی لئے اس کی لاش کے ساتھ جانوروں کو بھی دفن کیا گیا، مگر تحقیق کار تا حال یہ نہیں جان پائے کہ اس کی لاش کے ساتھ انسانی پاﺅں کیوں دفن کیا گیا تھا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -