تھانہ نصیر آباد پولیس کے تشدد کا شکار مسیحی خاندان کا شدید احتجاج ، زیر حراست نوجوان کی رہائی کا مطالبہ

تھانہ نصیر آباد پولیس کے تشدد کا شکار مسیحی خاندان کا شدید احتجاج ، زیر ...

 لاہور (کرائم رپورٹر)ایس ایچ اوتھانہ نصیر آباد نے منجر کی غلط اطلاع پر 5عیسائی شہریوں کوشہر کے مختلف علاقوں سے اغوا کر کے شدید تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔عدالتی بیلف نے شہریوں کو چنگل سے آزاد کروایا۔ایس ایچ او تھانہ عمران پڈانہ نے جوڈیشل مجسٹریٹ کے سامنے ہی بیلف کو کرپٹ قرار دیدیا۔ ایڈیشنل سیشن جج سیف اللہ سوہل ان پر برس پڑے،فاضل جج نے ریمارکس دئے کہ بیلف ججوں کا بااعتماد عملہ ہے ،بیلف پر تنقید کا مطلب عدالت پر تنقید ہے ،عمران پڈانہ نے بیلف لیکر آنے والے شہری کو اغوا کر کے اپنی حراست میں لے لیا اور خدشہ ہے کہ اسے کہیں پولیس مقابلہ میں پار نہ کر دیا جائے،جس کے باعث مغوی کے اہل خانہ اور محلہ داروں نے لاہور پریس کلب کے سامنے روڈ بلاک کر کے احتجاجی مظاہرہ کیا ، ادھرعدالت نے کل بروز پیر زیر حراست شہری کو پیش کر نے کا حکم دیا ہے ،مظاہرین نے خدشہ ظاہر کیا کہ بروقت بازیابی نہ ہوئی تو پولیس اسے مار دے گی۔ لواحقین ایس ایچ او نصیر آباد عمران قمر پڈانہ کے خلاف سراپا احتجاج بنے رہے۔ اس موقع پر مظاہرین نے میڈیا نمائندوں کو بتایا کہ عمران قمر پڈانہ نے اپنے کسی منجر کی غلط اطلاع پر اپنے کار خاص اظہر ، وقاص اور زاہد کانسٹیبلان کے ہمراہ عوامی کالونی اشرف چوک ، حسین آباد لاہور کینٹ اور قینچی امرسدھو سے باپ برکت مسیح اور اس کے بیٹے ساغر مسیح ، 2بھائیوں کامران عارف اور دانش عارف ، شفاقت مسیح اور صدیق مسیح کو ان کے گھروں سے گرفتار کیا ، اہل خانہ نے وجہ گرفتاری جاننا چاہی تواہلکاروں نے خواتین کو دھکے دئے ،مغلظات سے نوازااورتشدد کا نشانہ بنایا پھر شہریوں کو سرکاری ڈالے میں ڈال کر تھانہ نصیر آباد لے گئے جہاں رات بھر انھیں برہنہ کر کے تشدد کا نشانہ بنایا ۔ شکیل نے ایڈیشنل سیشن جج سیف اللہ سوہل کی عدالت سے اپنے والد اور دیگر کی بازیابی کیلئے رابطہ کیا تو عدالت نے بیلف کو تھانہ نصیر آباد بھیجا جہاں زیرحراست شہریوں کو بازیاب کروا کر آزاد کر دیا گیا ۔ مظاہرین کا کہنا تھا کہ شہری شکیل کو بیلف بھجوانے کی پاداز میں ایس ایچ او نے تھانہ سے غائب کر کے ذاتی ٹاچر سیل میں منتقل کردیا ہے اورقوی شبہ ہے کہ اسے قتل کر کے شہر کے کسی بھی خالی پلاٹ یا نہر میں پھینک دیا جائے گا ۔ عدالت نے کل بروز پیر کو مغوی شہری شکیل کو عدالت میں پیش کر نے کا حکم دیا ہے ۔شکیل کے ورثاء اور محلہ داروں نے الزام عائد کیا کہ عمران قمر پڈانہ نے نصیر آباد میں تعیناتی کے بعد عیسائی برادری کو کچلنے کا اعلان کر رکھا ہے۔

مزید : علاقائی