پاکستان میں پانی کی قلت،نہروں کے پانی کی چوری روکنے کے لیے رینجرز نے ایسا کام کردیا کہ آپ کے لیے بھی یقین کرنا مشکل ہو جائے گا

09 جولائی 2018 (19:51)

میرپورخاص(ڈیلی پاکستان آن لائن ) میرپورخاص ضلع میں پانی چوری کی روک تھام کرنے کے لئے رینجرز کے اقدامات، واٹر کورس اور شاخوں کا گشت، صورت حال کاجائزہ لیا،رینجرز کی تعیناتی پر ٹیل کے آبادگاروں نے خوشی اور اطمینان کا اظہار کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق میرپورخاص سمیت زیریں سندھ میں بڑے پیمانے پر زرعی پانی کی چوری اور نہروں کے آخری حصہ میں پانی کی شدید قلت کی شکایت کا نگراں سندھ حکومت نے نوٹس لیتے ہوئے پانی چوری کی روک تھام اور پانی کی تقسیم کو منصفانہ بنانے کے لئے نہروں اور شاخوں کی نگرانی کرنے کے لئے رینجرز کی خدمات حاصل کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔اطلاعات کے مطابق اس فیصلہ پر عمل درآمد کرتے ہوئے بھاری تعداد میں رینجرز نے زیریں سندھ میں پانی کی فراہمی کے سب سے بڑے نظام نارا کینال سے نکلنے وا لی بڑی نہروں جمڑاو ایسٹ،جمڑاو ویسٹ اور تھر ڈویڑن میں اپنی ذمہ داریاں سنھبال لی ہیں اور نہروں اور شاخوں سے نکلنے والے واٹر کورس اور ماڈول کی پیمائش کرنے کے ساتھ ساتھ اسکی کڑی نگرانی شروع کردی ہے،دوسری جانب ٹیل کے متعدد آبادگاروں نے رینجرز کی تعیناتی پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے بااثر زمیندار محکمہ آبپاشی کے کرپٹ عملہ کی ملی بھگت سے پانی کی چوری کررہے تھے۔رینجرز کی تعیناتی کے بعدسے ٹیل میں پانی پہنچنا شروع ہو گیا ہے۔

مزیدخبریں