جعلی ویڈیو کے ذریعے  عدلیہ کے وقار کو مجروح کیا گیا، کامران سیف

جعلی ویڈیو کے ذریعے  عدلیہ کے وقار کو مجروح کیا گیا، کامران سیف

  

لاہور(پ ر) مسلم لیگ ق کے راہنمامیاں کامران نے کہا ہے کہ ن لیگ کی طرف سے جعلی ویڈیو کے ذریعے عدلیہ کے وقار کو مجروح کیا گیا۔

متعلقہ جج کی طرف سے ویڈیو کی تردید پر مسز صفدر پر توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔

 متعلقہ جج کی طرف سے نواز شریف کیس کی دوران سماعت ن لیگ کی طرف سے رشوت کی پیشکش اور دھمکیوں سے ثابت ہوتا ہے کہ ن لیگ دھونس دھاندلی کے ذریعے فیصلہ اپنے حق میں کروانا چاہتی تھی۔

 جبکہ متعلقہ جج نے دباؤ میں آنے سے انکار کیا اور قانون اور شواہد کی بنیاد پر فیصلہ دیا تو ان کے خلاف جعلی ویڈیو پیش کرکے عوام کو گمراہ کرنے کے ساتھ ساتھ عدلیہ پر بھی انگلیاں اٹھائیں گئی ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے مسلم لیگ ہاؤس میں کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ میاں کامران سیف نے کہا کہ مریم صفدر کی طرف سے سرخرو ہونے کی باتیں کرنے کی بجائے بیرون ملک جائیدادیں،کاروباری ادارے ملک میں واپس لاکر سرخرو ہونے کی باتیں کی جائیں۔سرخرو ہونے کا آسان طریقہ جائیدادوں اور کاروبار ی اداروں کی منی ٹریل عدالتوں میں پیش کرنا ہے جس میں شریف فیملی بری طرح ناکام رہی ہے۔جس کی بناء پر نواز شریف جیل میں اور مسز صفدر اور کیپٹن صفدر ضمانت پر ہیں۔انہوں نے کہا کہ جعلی ویڈیو پیش کرنا اداروں کے خلاف مذموم کوشش ہے اور اس کیس پر اعلیٰ عدلیہ نوٹس لے اور کارروائی کرے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -