ایشیا ئی ترقیاتی بینک کا بھی پاکستان کو 10ارب ڈالر قرض دینے کا اعلان

ایشیا ئی ترقیاتی بینک کا بھی پاکستان کو 10ارب ڈالر قرض دینے کا اعلان

  

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک ،نیوز ایجنسیاں ) انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ (آئی ایم ایف) کے مشن چیف برائے پاکستان ارنسٹو رمیزو رینگو نے کہا ہے کہ قرض پروگرام سے واضح ہو چکا کہ پاکستان معاشی نظم وضبط قائم کرے گا ۔ قرض پروگرام کے بعد بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کے مشن چیف برائے پاکستان ارنسٹو رمیزو رینگو نے نیوز کانفرنس میں بتایا کہ پاکستان کو ایک ارب ڈالر کی پہلی قسط مل گئی ہے ۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے ارنسٹو رمیزو رینگو کا کہنا تھا کہ قرض پروگرام کا مقصد معاشی اور اداروں کا استحکام ہے ۔ پاکستان نے معاشی اصلاحات پر توجہ دی ہے ۔ ٹیکس آمدن بڑھے گی تو معاشی ترقی بڑھے گی ۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں ڈالر کا ایکس چینج ریٹ حقیقت کے قریب تر ہے ۔ پاکستان میں ٹیکس آمدن بڑھانا، معاشی استحکام کے لیے ضروری ہے ۔ ٹیکس کا دائرہ کار بڑھے تو خسارہ کم ہو سکتا ہے ۔ معاشی کارکردگی میں شفافیت کیلئے سٹیٹ بینک کی خود مختاری ضروری ہے ۔ ارنسٹو رمیزو رینگو کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف پروگرام پاکستان کے استحکام کے کئی راستے کھولے گا ۔ قرض پروگرام سے واضح ہو چکا کہ پاکستان معاشی نظم وضبط قائم کرے گا ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں ٹیکس کی چھوٹ، مراعات کو کم کرنا اور معیشت میں ٹیکس کا حصہ 1;46;7 فیصد بڑھانا وقت کی ضرورت ہے ۔ یورو بانڈ اور سکوک کے اجرا کا فیصلہ پاکستان کی حکومت کرنا ہے ۔ اس کے علاوہ سرکاری ادارے نقصان میں چلانے ہیں یا فائدہ میں یہ فیصلہ حکومت نے کرنا ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان کی وفاقی حکومت ٹیکس آمدن کا 57 فیصد صوبوں کو فراہم کرتی ہے، ٹیکس ہدف کے حصول کیلئے مرکز اور صوبوں کو مشترکہ کوششیں کرنا ہوں گی، 5500 ارب کا ٹیکس جمع کرنے کیلئے صوبوں کو بھی کردار ادا کرنا ہوگا ۔

آئی ایم ایف

اسلام ;200;باد(سٹاف رپورٹر،;200;ن لائن) ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) نے پاکستان کو 10 ارب ڈالرز قرضہ فراہم کرنے کا اعلان کردیا ۔ ایک اعلامیہ کے مطابق اے ڈی بی اگلے پانچ سال میں پاکستان کو یہ رقم فراہم کرے گا ۔ اعلامیے میں کہا گیا کہ پاکستان کے ساتھ نئی شراکت پر حکمت عملی طے کی جارہی ہے جبکہ یہ پروگرام 2024 تک جاری رہے گا، اس حوالے سے پاکستان کے ساتھ مذاکرات بھی کیے گئے ۔ رواں مالی سال کے دوران پاکستان کو 2;46;1 ارب ڈالرز فراہم کیے جائیں گے جبکہ 10 ارب ڈالرز کی رقم مختلف منصوبوں کے لیے جاری کی جائے گی ۔ خیال رہے کہ اس سے قبل عالمی مالیاتی ادارے آئی ایم ایف کی جانب سے پاکستان کے لیے 6 ارب ڈالر کے قرض کی منظوری کے بعد ایک ارب ڈالر کی پہلی قسط موصول ہو گئی ۔ وزارت خزانہ کے ذراءع نے بتایا ہے کہ آئی ایم ایف سالانہ دو ارب ڈالر پاکستان کو دے گا ۔ ا ;200;ئی ایم ایف مجموعی طور پر تین سالوں میں پاکستان کو چھ ارب ڈالر دے گا ۔ اے ڈی بی نے اعلامیے میں بتایا کہ قرض کے پاکستان اورایشیائی ترقیاتی بینک کے درمیان مذاکرات ہوئے جس میں کنٹری پارٹنرشپ کے تحت حکمت عملی سے متعلق مشاورت کی گئی ۔

ایشیائی ترقیاتی بینک

مزید :

صفحہ اول -