تاجر سڑکوں پر، ایف پی سی سی آئی خاموش تماشائی کیوں ;238; بزنس میں پینل

    تاجر سڑکوں پر، ایف پی سی سی آئی خاموش تماشائی کیوں ;238; بزنس میں پینل

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)فیڈیشن پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں بزنس مین پینل کے ترجمان اور سیکرٹری جنرل (فیڈرل) احمد جواد نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ دسمبر مےں بزنس کمیونٹی ےوبی جی عہدیداران کا گریبان پکڑے گی، آج پورے ملک کی بزنس کمےونٹی نے ےوبی جی کی کارکردگی دےکھ کر ردی کی ٹوکری مےں پھےنک دی ہے،سوائے جھوٹ کے علاوہ کچھ نہےں تھا ۔ احمد جواد نے کہا کہ تاجرسڑکوں پر ہے اور اےف پی سی سی آئی خاموش تماشائی بنا ہواہے ۔ ایف پی سی سی آئی بھول گئی ہے کہ سمال چیمبرز اور سمال اےسوسی ایشنز بھی فیڈریشن کے ممبر ہےں ۔ پہلے ٹی ڈےپ کا بےڑہ غرق کےا اوراب اےف پی سی سی آئی کا ادرہ اپاہج بنا دےا ہے ۔ ےوبی جی اور فےڈریشن چیمبر کی بے حسی آج پورے ملک کی بزنس کمیونٹی کو عیاں ہو گی ہے انشاء اللہ بزنس مےن پےنل کامےاب ہوکر بزنس کمےونٹی کو عزت دلوائے گی ۔ اور گورنمنٹ کے ساتھ مل کر تاجر دوست پالےسی بناے گے جس سے ٹےکس نیٹ بھی بڑھے گا ، اور تاجر کی عزت بی ہو گی ۔ مےاں انجم نثارکی قےادت میں بزنس مےن پےنل ےوبی جی کا ہر جگہ پر پوسٹ ماٹم کرے گاکےونکہ ےوبی جی کے پاس اپوزےشن پر بے معنی الزامات لگا نے کے سوا کچھ بھی نہیں ہے اور پچھلے چند سالوں سے جھوٹ کی سیاست پر وہ ابتک زندہ ہیں ۔ احمد جواد نے مزید کہا کہ بزنس کمیونٹی کو حکومت سے بہت ساری امیدیں ہیں اورحکومت اپنے منشور اور وزیر اعظم عمران خان کے تاجر و صنعتکار دوست ویژن کے مطابق بزنس کمیو نٹی کے مسائل کو خوش اسلوبی سے حل کیا جائے اورپاکستان کے مختلف شہروں میں گومگوں کی کیفیت اور کاروباری مندا ختم ہو سکے تاکہ معیشت کا پہیہ ایک بار پھر سے رواں دواں ہو سکے ۔ اس وقت پاکستان کے لئے ضروری ہے کہ صنعتی پیداواری لاگت کم کی جائے تاکہ برآمدات کو اسکے ٹارگٹ ۵۳ سے ۰۴ ارب ڈالر تک بڑھایا جائے تاکہ تجارتی خسارہ کم ہو سکے اور گروتھ ریٹ میں اضافہ ہو سکے ۔ بزنسمین پینل بطور اپوزیشن گروپ ایف پی سی سی آئی میں اپنی ذمہ داری کا احساس ہے اور حکومت کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے ہیں تاکہ پبلک پرائیویٹ پارٹرشپ کو فروغ مل سکے اس سلسے میں تاجر و صنعتکاروں کی جائز مطالبت کو فی الفور منظور کیا جائے ۔

مزید :

کامرس -