تحصیل کونسل کے ممبران کا ناظم اور ٹی ایم او کیخلاف احتجاج

تحصیل کونسل کے ممبران کا ناظم اور ٹی ایم او کیخلاف احتجاج

  

تورڈھیر(نمائندہ خصوصی)تحصیل لاہورجوڈیشل کمپلیکس کے مین گیٹ کے باہر تحصیل کونسلران کااحتجاج،مظاہرین نے تحصیل ناظم اورٹی ایم او کے خلاف شکایتی نعروں کے پلے کارڈاُٹھارکھے تھے، اپوزیشن لیڈر محمدفہیم خان، محمداسدزمان، مستجاب خان ایڈوکیٹ جبکہ تحصیل گورنمنٹ کے حمایتی ارکان ذوالفقار اورسہیل انور نے بھی احتجاجی کیمپ سے خطاب کیا،تحصیل لاہورپریس کلب کے صدرظفراقبال سائل اورٹی ایم اوکادیگرصحافیوں کی ٹیم اورپی ٹی آئی تحصیل لاہورکے صدرعرفان شیر کے ہمراہ فریقین میں مصالحت کی کوشش،تحصیل ناظم مصالحتی ٹیم کاجرگہ قبول کرکے اپوزیشن ارکان کیساتھ مل بیٹھ کرجائزمطالبات تسلیم کرنے پرآمادہ ہوگئے، مظاہرین کی جانب سے آپس میں مشاورت کے بعدمثبت جواب دینے کی یقین دہانی۔ اس موقع پر مستجاب خان ایڈوکیٹ نے مظاہرین کی جانب سے قراردادوں کی شکل میں احتجاجی کیمپ کے اغراض ومقاصد پیش کرتے ہوئے بتایاکہ گزشتہ چھ ماہ سے بارباردرخواستیں دینے کاباوجود اجلاس طلب نہ کی گئی انکاکہنا تھاکہ ہمارایہ احتجاجی کیمپ تین دن تک پرامن رہیگا اوراگرنمبر1 ان تین دنوں میں آئے ہوئے فنڈز جوکہ ٹیم ایم اے کے اکاو¿نٹ میںپڑاہے کاٹینڈر نہ کرایاگیانمبر2 اگرتحصیل فنڈزسے سلائی مشینوں ،ڈسبنوں،سٹریٹس لائٹس ،کچرااُٹھانے والی لوڈرگاڑیوں اورسپورٹس سامان کی خریداری جس کیلئے تحصیل فنڈزسے الگ رقم رکھی گئی ہے کاٹینڈر یاکوٹیشن تیار نہ کیاگیانمبر3 لوکل ٹیکس کاٹھیکہ جوکہ غیرقانونی اوراقرباپروری کی بنیادپر دیاگیاہے کی منسوخی نہ کی گئی نمبر4 اگرتمام کمیٹیوں اورخاص کر اکاو¿نٹس کمیٹی کااجلاس کاشیڈول تیار نہ کیاگیا اورکمیٹی کے ممبران کوتمام تر ریکارڈپیش کرنے پر ٹی ایم اے سٹاف کوپابندنہ کیاگیا نمبر5 اورجب تک ٹی ایم او اوراکاو¿نٹس سیکشن اپنی حیثیت سیاسی یاسرکاری واضح نہ کریگا نمبر6 اگرتین دنوں میں کسی قراردادپر عمل نہ کیاگیا تو وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا، وزیربلدیات شہرام خان اور سیکرٹری لوکل گورنمنٹ کومطلع کرتے ہیں کہ پھرہم ٹی ایم اے بلاک کوتالے لگاکر احتجاج ریکارڈکریںگے جسمیں عوام بھی ہمارے ہمراہ ہونگے جسکے نتیجہ میں کسی بھی ناخوشگوار واقعہ اورلاءاینڈآرڈر کے مسائل جنم لینے کی ذمہ داری ٹی ایم او لاہورتحصیل ناظم لاہورپرہونگی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -