پشاور،تاجر اتحاد کی مہنگائی اور بیروزگاری کیخلاف ریلی

پشاور،تاجر اتحاد کی مہنگائی اور بیروزگاری کیخلاف ریلی

  

پشاور(سٹی رپورٹر)تاجر اتحاد خیبر پختونخواہ کے صوبائی صدر مجیب الرحمن کی زیر قیادت احتجاجی ریلی حکومت کی طرف سے مہنگائی بیروزگاری اور ظالمانہ ٹیکسوں کے خلاف احتجاج کیا. جس میں عزیز خان، ظفر منہاس،نصیرالدین ہاشمی،میاں محمد اختر، محمد شوکت،شاہد خان،اور دیگر صدور اور دکانداروں نے شرکت کی.ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مجیب الرحمن نے کہا کہ ہوٹل، ریسٹورنٹ، شادی ہال اور ہیئرڈریسر کو سخت سے سخت ایس او پی کے تحت کاروبار کھولنے کی اجازت دی جائے کیونکہ لاکھوں ورکر بیروزگار ہو چکے ہیں جو تاجر برادری کے معاشی قتل کے مترادف ہے حکومت کی طرف سے ہر ایس او پی پر عن و من عمل کرنے کے لئے تیار ہیں لیکن حکومت وقت آئے روز مہنگائی میں اضافہ کرتی جارہی ہے اور خوردونوش، پیٹرول آج جو بجلی میں 14 فیصد اضافہ کیا گیا ہے اس کو ہم مکمل طور پر مسترد کرتے ہیں اور چیف آف آرمی سٹاف صدر پاکستان سے اپیل کرتے ہیں کہ خدارا تاجروں اور عوام کو بالخصوص درمیانے طبقے کا معاشی قتل بند کیا جائے اور انکو جینے کا حق دیا جائے اور کسی کی عزت نفس سے نہ کھیلا جائے اس وقت حکومت کی طرف سے تمام پالیسی تاجر اور عوام دشمن پالیسیاں ہیں اور یہ ملک میں حالات کو خراب کرنے کی کوشش کررہے ہیں اور اپنی تجوریاں بھر رہے ہیں پاکستان اس وقت دیوالیہ پن کی گامزن ہیں اور اسکی تمام تر ذمہ داری ارباب اختیار اور اپوزیشن کے زمے ہیں ہم اپوزیشن سے مطالبہ کرتے ہیں کہ آپکی خاموشی کو کیا سمجھے یا تو آپ ارباب اختیار کے ہر فیصلے اور پالیسی بنانے میں شامل ہیں اور اگر اپوزیشن انکی پالیسیوں کے خلاف ہیں تو پھر کیوں اس ظالمانہ پالیسیوں کے خلاف آواز کیوں نہیں اٹھاتے. اور اسلام آباد میں مندر اور قادیانیت کی جو لہر اس ملک میں چل رہی ہے اس کی بھر پور مزمت کرتے ہیں اور ہم اس نام نہاد جمبورہت اور اس نام نہاد پارلیمنٹ کو مسترد کرتے ہیں اور ہم جنرل صاحب کو قدم بڑھانے کی بھرپور ہمایت کرے گے اور ہمارا یہ نعرہ ہے جرنل صاحب قدم بڑھاو ہم تمھارے ساتھ ہیں اور اس ظالمانہ پالیسیوں اور ظالمانہ پارلیمنٹ اور اپوزیشن کے خلاف تمام کرپٹ سیاستدانوں اور بیوروکریسی کے خلاف کاروائی کرے اور فوری طور پر پاکستان کے مظلوموں کی لوٹے ہوئے اثاثے اس ملک میں موجود کرپٹ پارلیمنٹ اور کرپٹ بیروکریسی کے اثاثوں کو نیلام کرکے اس رقم سے پاکستان کی معیشت کو مضبوط اور مستحکم بنایا جائے. تاکہ پاکستان کے مظلوم تاجر اور عوام کو جینے کا حق مل سکے اور آخر میں پاکستان کی عوام اور تاجروں سے اپیل کرتے ہیں کہ اس ظالمانہ پالیسیوں کے خلاف نکلنا ہو گا اور ان ظالموں سے اپنا حق چیینا ہوگا اور ملک کی سلامتی کے لئے دعا کی گئی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -