مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے نوجوان وکلاکیلئے تربیتی پروگرام کا انعقاد

مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے نوجوان وکلاکیلئے تربیتی پروگرام کا انعقاد

  

پشاور(نیوزرپورٹر)خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی پشاور میں صوبے کے مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے نوجوان وکلاء کیلئے تربیتی پروگرام کا آغاز ہو گیا ہے دو دنوں پر محیط اس تربیتی پروگرام کی افتتاحی تقریب میں ڈائریکٹر جنرل خیبرپختونخوا جوڈیشل اکیڈمی ضیاالدین خٹک،ڈین فیکلٹی سید کمال حسین شاہ، سینئر ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن اشفاق تاج،سینئر ڈائریکٹر ریسرچ اینڈ پبلی کیشن غلام عباس سمیت وکلاشریک ہوئے ڈائریکٹر جنرل اکیڈمی نے وکلاکو جوڈیشل اکیڈمی آمد پر انہیں خوش آمدید کہتے ہوئے تربیتی پروگرام کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی۔ ان کا کہنا تھا کہ عدلیہ کسی بھی ریاست کا ایک اہم ستون ہے اور بار اور بنچ ایک دوسرے کیلئے لازم و ملزم ہیں جبکہ ججز اور وکلاملکر لوگوں کو سستے اور فوری انصاف کی فراہمی میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ ا ن کا کہنا تھا کہ عدلیہ کی بہتر اور قانون کے مطابق معاونت کی فراہمی کے لئے وکلاکی موجودہ دور کے تقاضوں کے مطابق تربیت فراہم کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ ڈی جی جو ڈیشل اکیڈمی کا کہنا تھا کہ چونکہ بار اور بنچ گاڑی کے دو پہیوں کے مانند ہیں لہذاشعبہ وکالت کے نئے وکلاکیلئے ان تربیتی پروگراموں کا مقصد لوگوں کو فوری اور سستے انصاف کی فراہمی کے کاز کو مزید تقویت دینا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ وکلاکو پیشہ وارانہ طور پرمکمل تیار کرنے کیلئے اکیڈمی نے خصوصی دو روزہ تربیتی کورس مرتب کیا ہے ڈی جی جوڈیشل اکیڈمی کا کہنا تھا کہ انصاف کی فراہمی کی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے اورمروجہ عدالتی نظام کو تقویت دینے کیلئے خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی نے نظام انصاف سے منسلک تمام اداروں کے نمائندوں کیلئے تربیتی پروگراموں کے ذریعے اہم کردار ادا کررہی ہے۔انہوں نے کہا کہ وکلااپنے پیشہ وارانہ صلاحیتوں کو مزید نکھانے کیلئے انتھک محنت کو یقینی بنائے تاکہ عوام کوفوری اور سستے انصاف کی فراہمی میں مدد مل سکے۔انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ اس تربیتی پروگرام سے نہ صرف شرکاکے علم میں اضافہ ہوگا بلکہ ان کے پیشہ وارانہ صلاحیتوں میں اضافے کا سبب بھی بنے گا۔ ڈی جی اکیڈمی نے بتایا کہ اکیڈمی صوبے کے تمام اضلاع کے وکلاکیلئے تربیتی پروگراموں کا سلسلہ جاری رکھے گی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -