0 2019-2فیصل آباد کیلئے محکمانہ بد انتظامی کے لحاظ سے بدترین سال

0 2019-2فیصل آباد کیلئے محکمانہ بد انتظامی کے لحاظ سے بدترین سال

  

فیصل آباد(سپیشل رپورٹر)مالی سال 2019-20فیصل آباد کیلئے محکمانہ بد انتظامی کے لحاظ سے بدترین سال رہاہے فیصل آباد کو مختص ہونیوالے 14014ملین سے حکومت نے صرف 8522ملین روپے جاری کئے جبکہ میگا پیکیج کا مطالبہ کرنیوالے اراکین اسمبلی دستیاب فنڈز کوبھی قابل استعمال نہ بنا سکے جس کے باعث فیصل آباد کو جاری ہونیوالے 8572ملین سے بھی 2246ملین روپے کے فنڈز لیپس ہوگئے اور دستیاب فنڈز میں سے بھی 26فی صد شہر کی تعمیروترقیاتی کاموں پر خرچ نہ کیاجاسکا۔افسران کی مبینہ غفلت کے باعث میونسپل سروسز کی 425سکیموں پر صرف تیرہ فیصد کام ہوسکاہے جبکہ فیصل آباد میں سولنگ، نالیوں، سٹرکوں سمیت دیگر 120ترقیاتی سکیموں پر ایک روپیہ بھی خرچ نہ کیاگیا جس کے باعث ضلع بھر میں سٹرکوں،سیوریج، سولنگ اور نالیوں کی حالت ابتر ہوچکی ہے۔

محکمانہ بد انتظامی

مزید :

صفحہ آخر -