کرپشن پر زیرو ٹالرنس، سرکاری فنڈز ضائع نہیں ہونے دینگے: علیم خان 

کرپشن پر زیرو ٹالرنس، سرکاری فنڈز ضائع نہیں ہونے دینگے: علیم خان 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

                                                                                                اسلا آباد(آئی این پی)وفاقی وزیر سرمایہ کاری بورڈ، مواصلات اور نجکاری عبدالعلیم خان کی زیر صدارت این ایچ اے میں اعلیٰ سطح کا اجلاس میں نیشنل ہائی وے اتھارٹی کو نئے ٹاسک اور محکمانہ ایکشن پلان دیدیا گیا عبدالعلیم خان کا کہنا تھا کہ سب سے پہلی ترجیح کراچی سے سکھر تک معیاری اور محفوظ موٹر وے کی تعمیر ہے کراچی سے کوئٹہ اور مانسہرہ سے بابوسر ٹاپ کی شاہرات کو بھی فوری تعمیر کیا جائے نیشنل ہائی وے اتھارٹی کو ریونیو میں اضافہ کر کے اپنے فنڈز بڑھانا ہونگے صرف حکومت پر انحصار نہ کریں اب من و سلوی اور سرکاری فنڈز سے کام نہیں چلے گاسرکاری فنڈز ضائع نہیں ہونے دینگے، کرپشن پر "زیرو ٹالرنس" ہو گی این ایچ اے کی کسی شاہراہ پر مقررہ وزن سے زیادہ لوڈ کے ٹرک نہیں آنے دینگے، این ایچ اے روش بدلے، ہمارے روڈ نیٹ ورک کا اصل ہدف سینٹرل ایشیا کے ممالک ہونا چاہئیں وفاقی وزیر مواصلات نے ہدایت کی کہ این ایچ ایکو منافع بخش بنائیں، ملازمین اور افسران کو اچھی تنخواہیں اور پیکج دینگے، صرف قابل عمل اور عوامی مفاد کے حامل منصوبوں پر فنڈز خرچ کئے جائیں، پرانا سسٹم ترک کرکے این ایچ اے کو پرائیویٹ سیکٹر سے مقابلہ کرنا ہو گا نیشنل ہائی وے اتھارٹی سعودی عرب، یو اے ای اور دیگر ممالک میں کنٹریکٹ حاصل کر سکتی ہے۔ لاہورسیالکوٹ موٹروے اور دیگر شاہراہوں پرایم ٹیگ یقینی بنایا جائے عبدالعلیم خان نے مختلف منصوبوں پر ملٹی نیشنل کمپنیوں سے تھرڈ پارٹی اویلیویشن کرانے کی ہدایت کی اجلاس میں سندھ، بلوچستان اور کے پی کے کی مختلف شاہرات کی تعمیر و مرمت پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

علیم خان 

مزید :

صفحہ آخر -