’’نشستیں خالی نہیں چھوڑی جا سکتیں‘‘(ن) لیگ نے مخصوص نشستوں سے متعلق کیس میں معروضات سپریم کورٹ میں جمع کرا دیں

’’نشستیں خالی نہیں چھوڑی جا سکتیں‘‘(ن) لیگ نے مخصوص نشستوں سے متعلق کیس میں ...
’’نشستیں خالی نہیں چھوڑی جا سکتیں‘‘(ن) لیگ نے مخصوص نشستوں سے متعلق کیس میں معروضات سپریم کورٹ میں جمع کرا دیں

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سنی اتحاد کونسل کی مخصوص نشستوں کے کیس میں مسلم لیگ (ن )نے وکیل حارث عظمت کے ذریعے تحریری معروضات جمع کرادیں، مسلم لیگ( ن) نے جواب میں کہا ہے کہ نشستیں خالی نہیں چھوڑی جا سکتیں،مسلم لیگ (ن )کی تحریری معروضات میں آرٹیکل 63 اے کا بھی حوالہ دیا گیا۔

نجی ٹی وی چینل" جیونیوز" کے مطابق معروضات( ن) لیگ میں کہا گیاہے کہ سنی اتحاد کونسل نے انتخابات میں حصہ نہیں لیا،سنی اتحاد کونسل نے کوئی سیٹ نہیں جیتی، سنی اتحاد کونسل نے مخصوص نشستوں سے متعلق کوئی لسٹ الیکشن کمیشن میں جمع نہیں کرائی،(ن )لیگ اور دیگر سیاسی جماعتوں نے مخصوص نشستیں لینے کیلئے الیکشن کمیشن کو خط لکھا،الیکشن کمیشن نے معاملے کو دیکھا اور مخصوص نشستیں( ن) لیگ اور دیگر سیاسی جماعتوں کو الاٹ کیں۔

معروضات میں مزید کہا گیا ہے کہ جب کوئی سیٹ نہیں جیتی تو کسی آزادامیدوار کو سنی اتحادکونسل میں شامل ہونے کا فائدہ نہیں،مخصوص نشستیں خواتین، اقلیتوں کی نمائندگی کیلئے ہوتی ہیں جنہیں خالی نہیں چھوڑا جا سکتا۔