فرانس کے پارلیمانی انتخابات میں دائیں بازو کی جماعت کو شکست

فرانس کے پارلیمانی انتخابات میں دائیں بازو کی جماعت کو شکست
فرانس کے پارلیمانی انتخابات میں دائیں بازو کی جماعت کو شکست

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

پیرس(ڈیلی پاکستان آن لائن )فرانس میں قبل از وقت پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی ووٹنگ مکمل ہونے کے بعد آنے والے نتائج میں دائیں بازو کی جماعت کو شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ 
فرانس میں اتوار کو قبل از وقت پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے کے لئے ووٹنگ ہوئی تھی، انتخابات میں کل 577 نشستوں پر امیدوارر مدمقابل تھے۔ غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق دوسرے مرحلے کی ووٹ کے نتائج آنے کے بعد بائیں بازو کی جماعت پاپولر فرنٹ 182 فیصدووٹ لیکر سب سے آگے اور صدر میکرون کی جماعت 163 فیصد ووٹوں کے سا تھ دوسرے نمبر پر رہی جبکہ پہلے مرحلے میں سب سے زیادہ ووٹ حاصل کرنے والی انتہائی دائیں بازو کی جماعت نیشنل ریلی 143 نشستوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر آسکی۔ یاد رہے کہ 30 جون کو ہونے والے فرانسیسی انتخابات کے پہلے مرحلے کے ایگزٹ پول نتائج کے مطابق انتہائی دائیں بازو کی جماعت نیشنل ریلی 34 فیصد ووٹوں کے ساتھ پہلے، بائیں بازو کی جماعت پاپولر فرنٹ 28.1 فیصد ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور صدر میکرون کی جماعت 20.3 فیصد ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہی تھی۔ دوسرے مرحلے کے نتائج آنے کے بعد کسی بھی جماعت کو حکومت بنانے کے لئے کم از کم مطلوبہ 289 نشستیں حاصل نہیں ہوسکےں اور ممکنہ طور پر وزارت عظمیٰ کے حصول کے لئے کسی بھی جماعت کو دوسری جماعتوں کا سہارا لینا پڑے گا۔ ۔