ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ نے 700غیر مستند افرادی قوت کو سرٹیفکیٹ فراہم کر دئیے

ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ نے 700غیر مستند افرادی قوت کو سرٹیفکیٹ فراہم کر دئیے

  

لاہور(کامرس رپورٹر)ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ نے 700غیر مستند افرادی قوت کو سرٹیفکیٹ فراہم کر دئیے۔ استاد شاگرد نظام(Recognition of Prior Learning) کے تحت صوبہ پنجاب کے پانچ شہروں میں غیر مستند افرادی قوت کیلئے ٹیوٹا کے 26اداروں میں15ٹریڈز میں رجسٹریشن کا عمل جاری ہے۔ سرٹیفکیٹ حاصل کرنے کے بعد وہ اب سرکاری و نیم سرکاری اداروں کے علاوہ بیرون ملک ملازمت کیلئے اہل قرار دیئے جاسکیں گے۔ان خیالات کا اظہار چیئرپرسن ٹیوٹا عرفان قیصر شیخ نے ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ کے ممبران سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر انجنئیر سہیل لاشاری، احمد شفیق،عبدالخالق خان، سہیل افضل، جنرل منیجرزعبدالقیوم ،اظہر اقبال شاد ،حامد غنی انجم، منیجر نبیلہ کاظمی ور دیگر افسران اس موقع پر موجود تھے۔عرفان قیصر شیخ نے بتایا کہ ٹیوٹا کے زیر انتظام ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ صوبہ پنجاب میں جپاتی (GPATI)ٹریننگ کورس کے امتحانات بھی منعقد کروا رہا ہے۔ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ کے امتحانی معاملات کو جرمن ماہرین کی جانب سے ڈیزائن کئے گئے طریقہ کار کے مطابق چلایا جا رہا ہے اور آجر ٹرینیز کی ٹریننگ کے دوران انکی کارکردگی کا تجزیہ کرنے کیلئے اپنی آراء بی دیتے ہیں۔

اسکے علاوہ ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ صوبہ بھر میں مقیم گورنمنٹ ٹیکنیکل ٹریننگ انسٹی ٹیوٹس ( مردانہ و زنانہ) کے ایک اور دو سالہ ڈپلومہ کورسز کے امتحانات کا بھی انعقاد کر رہاہے۔ٹریڈ ٹیسٹنگ بورڈ کے ممبران انجنئیر سہیل لاشاری اور احمد شفیق نے اپنے خطاب میں ٹیوٹا کی جانب سے پبلک پرائیوٹ پارٹنر شپ کو دوبارہ بحال کرنے کی کوششوں کو سراہا۔پرائیوٹ سیکٹر کو اس وقت ماہر افرادی قوت کی اشد ضرورت ہے ۔ ٹیوٹا کی جانب سے ماہر افرادی قوت کی فراہمی انڈسٹری کی کمی کو پورا کرنے کے ساتھ ساتھ ملکی معشیت کی ترقی کیلئے اہم ثابت ہوگی۔انہوں نے ٹیوٹا کی جانب سے ماہر افرادی قوت کو قطربھجوانے کیلئے کئے گئے اقدامات کو بھی سراہا۔

انہوں نے چیئر پرسن ٹیوٹا کو فنی تعلیم کے فروغ کیلئے اپنی خدمات کی بھرپور یقین دہانی کروائی۔

مزید :

کامرس -