پی جی ایم آئی کے قیام کے41 سال، دوسری ایلومنائی کانفرنس 10جون کو ہوگی

پی جی ایم آئی کے قیام کے41 سال، دوسری ایلومنائی کانفرنس 10جون کو ہوگی

  

لاہور(جنرل رپورٹر)چند سالوں کے دوران ریسرچ کی دنیا میں اپنا نام معتبر حوالوں سے رقم کروانے والے اداروں میں پوسٹ گریجوایٹ میڈکل انسٹی ٹیوٹ (پی جی ایم آئی)لاہور کا شمار بھی کیا جاتا ہے۔حکومت پنجاب کی سرپرستی کی بدولت یہاں سے فارغ التحصیل دنیا بھرمیں اپنی صلاحیتوں کا اعتراف کروا رہے ہیں۔یہی وجہ ہے کہ پی جی ایم آئی کے قیام کے41 سال مکمل ہونے پر ادارے میں دوسری ایلومنائی کانفرنس 10جون کو منعقد کی جارہی ہے جس میں اندرون و بیرون ملک سے پی جی ایم آئی کے فارغ التحصیل طلبا و طالبات کو شرکت کے لئے دعوت نامے ارسال کر دئیے گئے ہیں تاکہ وہ مل بیٹھ کر ایک دوسرے کے تجربات سے استفادہ کر سکیں اور ماضی کی خوکشگوار یادوں کو بھی دہرا سکیں۔ پرنسپل پی جی ایم آئی پروفیسر انجم حبیب وہرہ نے بتا یا کہ یہ ادارہ 1974میں معرض وجود میں آیا۔

اور اس وقت سے لے کر اب تک اس سپیشلائزڈ طبی تعلیمی ادارے نے گزشتہ 41 سالوں میں طبی درس وتدریس کے شعبے میں اندرون و بیرون ملک میں ممتاز اور منفرد مقام حاصل کیا ہے۔ صوبے میں بنیادی مراکز صحت سے لے کر اندرون و بیرون ملک میڈیکل کالجز و ہسپتالوں میں خدمات سرانجام دینے والے لاتعداد جونیئر وسینئر ڈاکٹر پی جی ایم آئی کے فارغ التحصیل ہیں۔

پی جی ایم آئی کے 41 ویں یوم تاسیس کے موقع پر منعقد کی جانے والی ایلومنائی کانفرنس تاریخی اہمیت کی حامل ہو گی ۔ کانفرنس پی جی ایم آئی کے فارغ التحصیل اہم پوسٹوں پر ماضی اور حال میں تعینات ہونے والے ڈاکٹرز کو مدعو کئے گئے ہیں۔جوکانفرنس کے دوران مختلف طبی مسائل کے حل، بیماریوں کے علاج اور میڈیکل تعلیم کی درس و تدریس میں پی جی ایم آئی کے کردارپر روشنی ڈالیں گے ۔ جس سے ان کے جونئیر بھی رہنمائی حاصل کر سکیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ اس بات میں کوئی شک نہیں کہ امیرالدین میڈیکل کالج کے قیام سے پی جی ایم آئی کے کردار کو نئی پہچان اور وسعت ملی ہے۔اورپی جی ایم آئی اور جنرل ہسپتال نہ صرف ڈینگی بلکہ دیگر حوالوں سے بھی حکومتی ترجیحات کو مدنظر رکھتے ہوئے پنجاب بھر کے طبی اداروں میں قائدانہ کردار ادا کر را ہے ۔اور اللہ تعالی نے چاہا تو مستقبل میں بھی کئی حوالوں سے ہم اہم اہداف بخوبی حاصل کریں گے۔ریسرچ کے شعبے میں ہم نے خصوصی طور پر فوکس کیا ہے اور ہم اس حوالے سے دیگر اداروں کے لئے ایک روشن مثال بن کر سامنے آئے ہیں۔ اور آئندہ بھی کئی منازل حاصل کر کے رہیں گے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -