ایشین گیمز آئند ہ برس انڈونیشیا میں کھیلی جائے گی

ایشین گیمز آئند ہ برس انڈونیشیا میں کھیلی جائے گی

اسلام آباد(آن لائن)پاکستان ایتھلیٹکس فیڈریشن کے صدر میجرجنرل ریٹائرڈ محمد اکرم ساہی نے کہا ہے کہ چیف آف آرمی سٹاف سے جلد ملاقات کرکے قومی اور پاکستان آرمی سے تعلق رکھنے والے دو کھلاڑیوں نوکر حسین اور اولمپئن محبوب علی کو ایشین گیمز کی تیاری کے سلسلہ میں ایک سال کے لئے بیرون ملک تربیت کے لئے بھیجنے کی درخواست کروں گا، ایشین گیمز آئند ہ برس 18 اگست سے 2 ستمبر تک انڈونیشیا میں کھیلی جائے گی، میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ نوکر حسین اور اولمپئن محبوب علی دونوں بھائی اچھے کھلاڑی ہیں اور میری خواہش ہے کہ ان دونوں کھلاڑیوں کو پاکستان آرمی ایک سال کے لئے ایشین گیمز کی تیاری کے سلسلہ میں بیرون ملک تربیت کے لئے بھیجیں اور جلد چیف آف آرمی سٹاف سے ملاقات کرکے ان دونوں کھلاڑیوں کو بیرون ملک تربیت کے لئے بھیجنے کی درخواست کروں گا، ایشین گیمز آئند ہ برس 18 اگست سے 2 ستمبر تک انڈونیشیا میں کھیلی جائیں گی، انہوں نے کہا کہ اگر ان کھلاڑیوں کو بیرون ملک تربیت کے لئے بھیجا جائے تو پاکستان ایشین گیمز میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرے گا۔

انہوں نے کہا کہ گذشتہ ماہ باکو آرزبائیجان میں کھیلی گئی اسلامک سولیڈیٹری گیمز میں پاکستان نے اتھلیٹکس کے 4x400 میٹر ریلے میں محبوب علی، نوکر حسین، عمر سعادت اور اسد اقبال نے کانسی کا تمغہ اور جیولین تھرو کے ایونٹ میں ارشد ندیم نے کانسی کا تمغہ حاصل کیا تھا،انہوں نے کہا کہ آئندہ ماہ 6 سے 9 جولائی تک بھارت میں ایشین اتھلیٹکس چیمپئن شپ کھیلی جائے گی جس میں پاکستان سمیت45 ممالک کے کھلاڑی حصہ لیں گے۔

جبکہ اس ایونٹ میں پانچ پاکستانی کھلاڑی شرکت کریں گے جن میں محبوب علی، نوکر حسین، عمر سعادت اور اسد اقبال ارشد ندیم شامل ہیں، محبوب علی، نوکر حسین، عمر سعادت اور اسد اقبال 4x400 میٹر ریلے جبکہ ارشد ندیم جیولین تھرو کے ایونٹ میں حصہ لیں گے، انہوں نے کہا کہ ایونٹ کی تیاری کے سلسلہ میں کھلاڑیوں کا تربیتی کیمپ پاکستان سپورٹس کمپلیکس، اسلام آباد میں جاری ہے اور تربیتی کیمپ کی نگرانی محمد بلال اور فیاض بخاری کر رہے ہیں اورتربیتی کیمپ میں کھلاڑی رمضان المبارک کے باعث رات کو تربیت حاصل کر رہے ہیں،ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ بھارت، جاپان، چین، کوریا اور سری لنکا کی ٹیموں کو ایونٹ کی اچھی ٹیمیں قرار دی جا رہی ہیں،اگر ہمارے کھلاڑی ان کسی میں دونوں ممالک کے کھلاڑیوں کے خلاف کامیابی حاصل کرلیتے ہیں تو میڈلز آنے کے کافی امیدیں ہیں،ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ارشد ندیم بھی اچھا کھلاڑی ہے اور یہ بیرون ملک تربیت کے لئے ایڈجسٹ نہیں ہو سکا اور پاکستان میں بھی یہ اچھی تربیت حاصل کر رہا ہے گذشتہ ماہ باکو آرزبائیجان میں کھیلی گئی اسلامک سولیڈیٹری گیمز میں بھی اس نے جیولین تھرو،76 میڑ سے زائد تھرو کر کے ایونٹ میں ارشد ندیم نے کانسی کا تمغہ حاصل کیااور اس کے ساتھ ساتھ گذشتہ برس فروری میں بھارت میں کھیلی گئی سیف گیمز میں جیولین تھرو میں78 میٹر تھرو کے ساتھ کانسی کا تمغہ حاصل کر چکا ہے، ایک اور سوال کے جواب میں اکرم ساہی کا کہنا تھاکہ ملک میں کھیلوں کے ٹیلنٹ کی کمی نہیں ہے بلکہ سہولیات فراہم کرنے کی ضرورت ہے انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس ابھی تک انڈور ٹریک نہیں ہے جس پر کھلاڑیوں بارش یا موسم کی خرابی کی باعث تربیت حاصل کر سکیں اور حکومت کو چاہئے کہ لاہور، کراچی، اسلام آباد، پشاور اور کوئٹہ میں انڈور ٹریک بنائے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی