نیب نے پنجاب بینک اور فیسکو کمپنی کے ڈیفالٹرزسے لاکھوں کی ریکور ی کرلی

نیب نے پنجاب بینک اور فیسکو کمپنی کے ڈیفالٹرزسے لاکھوں کی ریکور ی کرلی

لاہور( خبرنگار) نیب لاہور نے فیسکو کمپنی کے ڈیفالٹرزسے 41 لاکھ 53 ہزار ریکور کر کے گزشتہ روز فیسکو کمپنی کے لیگل ہیڈ کے حوالے کر دئے ہیں۔ اس سے قبل فیسکو اور لیسکو کمپنی سمیت بینک ڈیفالٹرز سے بھی نیب کروڑوں روپے ریکور کر چکا ہے۔ اس حوالے سے نیب لاہور کے ڈی جی شہزاد سلیم نے کہا کہ قومی احتساب بیورو (نیب) جہاں کرپشن کے خلاف زیرو ٹالرنس پالیسی پر کاربند ہے وہیں کرپٹ عناصر سے لوٹی گئی رقوم متعلقہ حکام اور اداروں کو واپسی بھی جاری رکھے ہوئے ہے۔ اسی مد میں بینک آف پنجاب کے لون ڈیفالٹر اور فیصل آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی(فیسکو) کے گھریلو و کمرشل نادہندگان سے لاکھوں روپے کی رقوم کے چیک متعلقہ افسران کے حوالے کئے۔انہوں نے کہا کہ بینک آف پنجاب نے زرعی زمین کے عوض لئے گئے 60 لاکھ روپے کے نادہندہ صبح صادق کے خلاف مارچ 2016میں کارروائی کی استدعا کی جس پر عملی اقدامات اٹھاتے ہوئے نیب لاہور کا ریکوری سیل حرکت میں آیا۔ ملزم کے خلاف کارروائی کے دوران ملزم نے جولائی2016میں رضاکارانہ سکیم کے تحت رقم کی واپسی کی استدعا کی جسکی منظوری نیب لاہور نے دی اور ملزم نے مارچ2017میں پہلی قسط کی مد میں 21لاکھ روپے جمع کروائے جبکہ بقایا رقم ملزم دو مختلف اقساط میں جمع کروانے کا پابند ہے۔ڈی جی نیب لاہور نے ملزم سے برآمد کی گئی رقم کا چیک لیگل ہیڈ محمد کامران کے حوالے کیا۔ فیسکو کی جانب سے فراہم کی گئی نادہندگان کی لسٹ میں سے صنعتی ڈیفالٹر سے 40لاکھ روپے اور فیسکو کے ہی گھریلو نادہندہ صارف سے 1لاکھ 75ہزار روپے کی وصولی کے بعدگزشتہ روز ڈائریکٹر کمرشل فیسکو کو 41لاکھ53ہزار روپے کا چیک حوالے کیا گیا ۔

مزید : صفحہ آخر