مظفرآباد، کروڑوں روپے کی سرکاری پراپرٹی فروخت کرنیکا منصوبہ ناکام

مظفرآباد، کروڑوں روپے کی سرکاری پراپرٹی فروخت کرنیکا منصوبہ ناکام

مظفرآباد(بیورپورٹ)مخصوص گروپ کی ایماء پر اے کے ایم آئی ڈی سی کی کروڑوں روپے کی پراپرٹی فروخت کرنے کا منصوبہ ناکام، ڈپٹی کمشنر مظفرآباد نے نیلامی منسوخ کروا دی۔تفصیلات کے مطابق محکمہ معدنی،صنعتی وترقیاتی کارپوریشن اپنے سابقہ دفتر واقع جلال آباد کی زمین جو دو کنال سے زائد رقبہ پر میحط ہے ایک بااثر گروپ کی فرمائش پر فروخت کرنے کا خواہاں تھا جس کی بذریعہ نیلامی فروختگی کے لیے اشتہار بھی جاری کیے گئے تھے نیلامی سے چند دن قبل ہی ڈپٹی کمشنر نے مداخلت کرتے ہوئے نیلامی کے عمل کو یہ موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ آپ(کارپوریشن)زمین کے مالک نہیں بلکہ کارپوریشن کے نام زمین ہے اور قانوناً کارپوریشن اس زمین کو استعمال میں تو رکھ سکتی ہے لیکن فروخت نہیں کر سکتی۔ڈپٹی کمشنر کے موقف کے بعد جب کارپوریشن نے اپنا ریکارڈ ملاحظہ کیا تو واقعی ان کے نام ریکارڈ میں تہہ زمین تھی جس بناء پر مجبوراً اے کے ایم آئی ڈی سی کو نیلامی کا عمل روکنا پڑا اور بذریعہ اشتہار پارٹیوں کو آگاہ کر دیا گیا کہ نیلامی منسوخ کر دی گئی ہے۔ذرائع کے مطابق زمین ہتھیانے کارروائی میں وزارت کے اپنے لوگ بھی ملوث ہیں اور سامنے اور لوگوں کو رکھ کر کارروائی ڈالی جا رہی تھی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر